• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

ترجمانوں کے اجلاس میں سابق چیف جسٹس کی آڈیو لیک پر بحث ہوئی، ذرائع

وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت ہوئے ترجمانوں کے اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آگئی۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی مبینہ آڈیو لیک کے معاملے پر بحث ہوئی۔

وزیراعظم نے ترجمانوں کو ن لیگ کی ماضی کی تاریخ اجاگر کرنے کی ہدایت کردی اور کہا کہ عوام کو بتایا جائے شریف فیملی کیسے ججز پر حملے کرتی رہی ہے۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے کہا کہ یہ مافیا ہے جو اپنی مرضی کے فیصلے لینے کے لیے ججز پر دباؤ ڈالتا ہے، ان کے ایسے ہتھکنڈے اب ملک پر نہیں چلیں گے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت اداروں کا احترام کرتی ہے اور ان کے ساتھ کھڑی ہے، ماضی میں بھی یہ مافیا عدلیہ پر حملہ آور ہوتے رہے۔

ذرائع کے مطابق دوران اجلاس وزیراعظم عمران خان آئندہ الیکشن الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) پر کرانے کے لیے پُرعزم دکھائی دیے۔

وزیراعظم نے اس موقع پر اپنے ترجمانوں کو ہدایت کی کہ ووٹنگ مشین سے متعلق عوام کو اعتماد میں لیں۔

انہوں نے کہا کہ آئندہ الیکشن ہر صورت ووٹنگ مشین پر ہی کرائیں گے، اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ میں جو رکاوٹیں ہیں دور کی جائیں۔

عمران خان نے کہا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے پاسپورٹ اور نائیکوپ کے ایشوز جلد حل کیےجائیں، حکومت اوورسیز پاکستانیوں سے کیا وعدہ ہر صورت پورا کرے گی۔

ذرائع کے مطابق ترجمانوں کے اجلاس میں بھی مہنگائی پر بات چیت ہوئی، اس پر وزیراعظم نے کہا کہ مہنگائی گلوبل ایشو ہے، حکومت عوام کو ریلیف کےلیے اقدامات کررہی ہے۔

انہوں نے ترجمانوں کو ہدایت کی کہ وہ عوام کو دنیا بھر میں مہنگائی سے متعلق اعداد و شمار پر اعتماد میں لیں۔

قومی خبریں سے مزید