آپ آف لائن ہیں
جمعرات10؍ذیقعد 1441ھ2؍جولائی2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

پھل کھانے کے بعد پانی پینا کیسا ہے؟

گرمیوں کے موسم میں زیادہ پانی پینے اور تازہ پھل کھانے کی خاص تاکید کی جاتی ہے، کیونکہ یہ دونوں منرلز اور غذائیت سے بھرپور ہیں، جو شدید گرمی میں بھی انسانی جسم کو تروتازہ رکھتے ہیں۔ لیکن ایک اہم سوال جو اکثر لوگ پوچھتے ہیں وہ یہ ہے کہ پھل کھانے کے بعد پانی پی سکتے ہیں یا نہیں؟

میڈیا رپورٹس کے مطابق ایک بھارتی ماہر غذائیت ’پوجا مکھیجا‘ کا اپنی رپورٹ میں کہنا ہے کہ کافی عرصے سے ایک طویل بحث جاری تھی کہ پھلوں کو کھانے کا بہترین وقت کون سا ہے؟ تحقیق کے بعد ماہرین نے بتایا کہ پورے دن میں پھل کو کسی بھی وقت کھایا جاسکتا ہے،  یہ صحت کے لیے بہترین ہے۔ لیکن یہ سوال اب بھی وہیں کا وہیں ہے کہ کیا پھل کھانے کے بعد پانی پینا صحیح ہے؟

اس حوالے سے کچھ لوگوں کا خیال ہے کہ پھل کھانے کے فوراً بعد پانی پینے سے سختی سے پرہیز کیا جانا چاہیے کیونکہ ایک عام بات جو اس سے متعلق کہی جاتی ہے وہ یہ ہے کہ پھلوں کے کھانے کے بعد فوراً پانی پینا پیٹ میں درد کی وجہ بن سکتا ہے کیونکہ پھلوں میں بہت زیادہ مقدار میں شوگر (فریکٹوز کی شکل میں) پائی جاتی ہے، اس لیے پھلوں پر پانی پینے سے معدے میں مختلف قسم کے انفیکشنز ہونے کا خطرہ بڑھ سکتا ہے۔

دوسری جانب ماہرین اس بات پر متفق ہیں کہ کچھ پھلوں کو کھانے کے بعد پانی بالکل نہیں پینا چاہیے جیسے کہ ’تربوز‘۔  یہ پیٹ میں جذب اور عمل انہضام کو سست کر دیتا ہے جس سے پیٹ میں تیزابیت ہوجاتی ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ پیٹ کے حساس مریض جب تربوز کے اوپر پانی پیتے ہیں تو انہیں شدید بے چینی کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ایک اور ماہرصحت کا کہنا ہے کہ کیلا کھانے کے بعد پانی (خصوصاً ٹھنڈا پانی) پینا صحت کے لیے نقصان دہ ہے، کیونکہ کیلا اپنی موروثی خصوصیات کی وجہ سےکھانا ہضم کرنا مشکل بنا دیتا ہے۔ البتہ کیلا کھانے کے 15 سے 20 منٹ بعد پانی پیا جاسکتا ہے۔

اس کے علاوہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ترشہ پھلوں (citrus fruits) اور زیادہ پانی پر مشتمل پھلوں کے بعد بالکل بھی پانی نہیں پینا چاہیے لیکن پھلوں کے ہضم ہونے کے بعد یعنی کم از کم آدھے گھنٹے یا ایک گھنٹے بعد پانی پی سکتے ہیں۔

صحت سے مزید