آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعرات19؍محرم الحرام 1441ھ 19؍ستمبر 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سابق ٹیسٹ کرکٹر عبدالقادر انتقال کرگئے

سابق ٹیسٹ کرکٹر عبدالقادر لاہور میں انتقال کرگئے


پاکستان کے مایہ ناز لیگ اسپنر عبدالقادر لاہور میں انتقال کرگئے۔

عبدالقادر کے داماد عمراکمل کے بھائی ٹیسٹ کرکٹر کامران اکمل نے موت کی تصدیق کی ہے۔

انہوں نے بتایا کہ عبدالقادر کو دل کا دورہ پڑنے پر اسپتال پہنچانے کی کوشش کی گئی تاہم وہ راستے ہیں میں دم توڑ گئے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ نے عبدالقادر کے انتقال کی خبر پر صدمے کا اظہار کرتے ہوئے اہل خانہ سے تعزیت کی ہے۔

چیئرمین پی سی بی احسان اور چیف ایگزیکٹو وسیم خان نے عبدالقادر کے انتقال پر گہرے دکھ کا اظہار کیا۔

قومی کرکٹ کے کپتان سرفراز احمد اور سابق کپتان معین خان نے ان کے انتقال کو کرکٹ کے لیے بڑا نقصان قرار دیا ہے۔

سابق کپتان شعیب ملک،اظہر محمود اور وہاب ریاض نے بھی ان کے انتقال پر افسوس کا اظہار کیا۔

عبدالقادر اپنے دور کے بہترین لیگ اسپنر تھے،وہ چیف سلیکٹر بھی رہ چکے ہیں۔

عبدالقادر نے دسمبر 1977ء میں انگلینڈ کے خلاف لاہور میں ٹیسٹ کیریئر کا آغاز کیا اور 67 میچوں میں پاکستان کی نمائندگی کی۔

ٹیسٹ کیریئر کے دوران انہوں نے 32 اعشاریہ 80 کی اوسط سے مجموعی طور پر 236 وکٹیں حاصل کیں۔

کسی بھی ٹیسٹ کی ایک اننگز میں اُن کی بہترین بولنگ 56 رنز کے عوض 9 وکٹیں تھی جبکہ 101 رنز دے کر 13 وکٹیں کسی بھی ٹیسٹ میچ میں اُن کی سب سے اچھی پرفارمنس تھی۔

ایک روزہ بین الاقوامی میچوں میں عبدالقادر نے اپنے کیریئر کی ابتداء جون 1983ء میں نیوزی لینڈ کے خلاف برمنگھم میں کی۔

عبدالقادر نے 104 ایک روزہ بین الاقوامی میچوں میں 26 اعشاریہ 16 کی اوسط سے 132 وکٹیں حاصل کیں، 44 رنز دے پانچ وکٹیں اُن کی بہترین پرفارمنس رہی۔

کھیلوں کی خبریں سے مزید