آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
منگل12؍ربیع الثانی 1441ھ 10؍ دسمبر 2019ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

علی سیٹھی نے بہن کی شادی کیسے یادگار بنائی؟


پاکستان کے نامور گلوکار علی سیٹھی نے اپنی بہن اداکارہ میرا سیٹھی کی شادی کی تقریب میں مشہور غزلوں اور گیت گا کر محفل میں رنگ جما دیا۔

علی سیٹھی نے ’آج جانے کی ضد نہ کرو‘ اور دیگر مشہور گیت گا کر تقریب کو یادگار بنایا۔

میرا کی شادی کی تقریب میں علی سیٹھی کی گائیکی نے مہمانوں کو خوب محظوظ کیا۔ غزلوں سمیت مختلف گانوں پر دلہن کے علاوہ مہمانوں نے بھی رقص کیا اور لطف اندوز ہوئے۔

یہ بھی پڑھیے: نجم سیٹھی کی بیٹی کا سوشل میڈیا پر اپنی منگنی کا اعلان

واضح رہے کہ اداکارہ میرا سیٹھی گزشتہ روز اپنے بچپن کے دوست بلال صدیقی سے رشتۂ ازدواج میں منسلک ہو گئیں۔

میرا سیٹھی نے اپنی شادی کی تقریب میں گلابی رنگ کا لباس زیب تن کیا جبکہ ان کے شوہر بلال صدیقی نے کریم رنگ کی شیروانی اور لال رنگ کا دوپٹہ لیا ہوا تھا۔

شادی جیسے خاص دن کے لیے میرا نے بہت زیادہ سج دھج کے بجائے گلابی لہنگے کے ساتھ اصلی پھولوں کا بنا ہار پہنا۔

نکاح کی تقریب میں بھی میرا نے سادگی کو ملحوظ خاطر رکھا۔

نامور ہدایت کار، ماڈل اور اداکار عدنان ملک نے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ پر میرا سیٹھی اور بلال صدیقی کی شادی کی تقریبات کی تصویریں اپلوڈ کرتے ہوئے شادی کی مبارکباد دی ۔


یاد رہے کہ میرا سیٹھی نے گزشتہ سال  اپنے مداحوں کو انسٹا گرام پر یہ بتایا تھا کہ انہوں نے اپنی زندگی کا ہمسفر چن لیا ہے۔ خوبصورت تصاویر اپ لوڈ کرنے کے علاوہ میرا نے دلچسپ انداز میں اپنی اور بلال کی ملاقات کے بارے میں بھی بتایا تھا۔

View this post on Instagram

In the spring of 2017, a tall, funny, curly-haired dude walked into my life. I'd known this curly-haired dude all my life -- in the way you know your parents' friends' kids -- but we'd never sought each other out. (Weirdly enough, Bilal and I overlapped at Oxford in 2008—he was doing his PhD, I was spending my junior year abroad. But we never looked each other up, never bumped into each other in that tiny cobbled town.) ⁣ ⁣ Almost a decade later, we met in Lahore on a warm February evening. We vaguely agreed to meet for dinner sometime. ⁣ ⁣ A few days later we were at Spice Bazaar, and it was suddenly cold again. Bilal asked what I'd been upto: he nodded across the table and asked gentle, probing questions. Lots of questions. In between licking mutton kunna gravy from my fingers, I found myself answering his questions with an openness and ease I hadn't encountered in myself in a long time. Later, we sat in the garden of my house and played with Max. My brother joined us. The three of us talked. Bilal dug his hand inside Max's mouth and pulled out a sharp branch. Max was all over him.⁣ ⁣ A few days later Bilal lost his mother to pneumonia (she'd had Parkinsons for a decade), and it was a wrenching, difficult time. Bilal and I would text. Talk about light stuff. He used the heart emoji unselfconsciously, as a friend might. The conversations veered from TV shows to politics to "plan for the day?" The few times we met before he left for DC, he talked openly about his regrets and hopes and dreams. Sitting across from him in Cosa Nostra, this time not very hungry because my body was clenched with affection and interest, I listened. He was warm and funny and brilliant. That night, I curled up next to him and we watched a show on Netflix. ⁣ ⁣ The next year was a whirlwind. We travelled together to Lisbon, Brussels, Amsterdam, New York, Islamabad, Reno, San Francisco. We went to a festival in the desert and slept under the stars. We danced to really bad music. We biked across the desert at night, our cycles glowing with fairylights. Bilal biked ahead so I could follow him. *continued in comments* ⁣

A post shared by Mira Sethi (@mira.sethi) on


خوبصورت پیغام میں میرا سیٹھی نے لکھا کہ بلال اس حیثیت سے ان کی زندگی میں 2017 کے موسم بہار میں داخل ہوئے۔ گویا کہ وہ اپنے منگیتر بلال کو بچپن سے ہی جانتی تھیں، جو کہ پرانے فیملی فرینڈ کے بیٹے ہیں لیکن یہ جاننا ایسا ہی تھا جیسے کہ آپ اپنے والدین کے پرانے دوستوں کے بچوں کو جانتے ہیں۔

 2008 میں دونوں آکسفورڈ یونیورسٹی میں زیر تعلیم بھی رہے لیکن اس کے باوجود ان کے درمیان کوئی خاص دوستی نہیں تھی۔

میرا نے منگیتر کی خیال رکھنے والی طبیعت سے متعلق لکھا تھا کہ بلال کے ساتھ لزبن، برسلز، ایمسٹرڈم، نیویارک، اسلام آباد، رینو، سان فرانسسکو تک کا سفر کیا۔ اس دوران صحرا میں بلال کے ساتھ بائیک پر بیٹھی تو انہوں نے بار بار مڑ کر پوچھا کہ تم ٹھیک ہو۔۔ ٹھنڈ تو نہیں لگ رہی۔

اپنے طویل نوٹ میں میرا سیٹھی نے یہ بھی لکھا کہ میرا بھائی علی سیٹھی اور پالتو کتا میکس بھی بلال کو بہت پسند کرتے ہیں۔

یاد رہے کہ میراسیٹھی سابق چیئرمین پی سی بی نجم سیٹھی اورپنجاب اسمبلی میں آزاد حیثیت سے منتخب ہونے والی جگنومحسن کی باصلاحیت بیٹی اور اداکارہ ہونے کے ساتھ ساتھ فکشن رائٹر بھی ہیں۔ اس کے علاوہ ڈیبیو فلم ’سات دن محبت ان ‘ سے فلمی دنیا میں بھی قدم رکھ چکی ہیں۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید