آپ آف لائن ہیں
منگل13؍شعبان المعظم 1441ھ 7؍اپریل2020ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

ٹرمپ کا ہواوے سے تعلق رکھنے والے ملکوں کو انتباہ

برلن(آئی این پی)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے چینی کمپنی ہواوے کے ساتھ تعلق رکھنے والے ممالک کے ساتھ حساس معلومات کا تبادلہ ختم کرنے کی دھمکی دی ہے۔جرمنی میں تعینات امریکی سفیر نے کہا ہے کہ صدر ٹرمپ کی ہدایات کے مطابق ہواوے کمپنی کے ساتھ تعلق رکھنے والے تمام ممالک کو متنبہ کیا جائے کہ امریکہ ان کے ساتھ حساس معلومات کا تبادلہ نہیں کرے گا۔بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکہ کچھ عرصے سے اپنے اتحادی ممالک پر دباؤ ڈال رہا ہے کہ وہ چین کی ٹیکنالوجی کمپنی ہواوے پر پابندی لگائیں۔ہواوے کا شمار دنیا کی بڑی ٹیکنالوجی کمپنیوں میں ہوتا ہے جس کو امریکہ نے سیکیورٹی کے لیے خطرہ قرار دیا ہے۔ہواوے انٹرنیٹ کی فائیو جی سروس مہیا کرنے والی سب سے بڑی کمپنی ہے۔ فائیو جی ڈیٹا ڈان لوڈ یا اپ لوڈ کرنے کی تیز ترین انٹرنیٹ سروس سمجھی جاتی ہے۔جرمنی میں تعینات امریکی سفیر رچرڈ گرینل نے ہواوے کی فائیو جی سروس کو ناقابل اعتماد قرار دیتے ہوئے کہا کہ اس انٹرنیٹ سروس کا استعمال کرنے والے تمام ممالک کے ساتھ اعلی سطح پر حساس معلومات کا تبادلہ منقطع کر دیا جائے گا۔گرینل نے ٹویٹ کیا کہ صدر ٹرمپ نے تمام ممالک کو ان کے فیصلے سے آگاہ کرنے کا کہا ہے۔یورپ میں امریکہ کے اتحادی ممالک بالخصوص برطانیہ اور فرانس نے ہواوے کے فائیو جی نیٹ

ورک پر پابندی لگانے سے انکار کر دیا تھا۔برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے برطانیہ میں فائیو جی سسٹم نصب کرنے میں ہواوے سے مدد مانگی ہے۔ برطانیہ کے اس فیصلے پر صدر ٹرمپ نے برہمی کا اظہار کیا ہے۔امریکی سیکرٹری خارجہ مائیک پومپیو نے جرمنی میں منعقد ہونے والی میونخ سیکیورٹی کانفرنس میں کہا تھا کہ چینی انٹیلجنس ایجنسیاں ہواوے کو جاسوسی کے لیے استعمال کریں گی۔ہواوے ٹیکنالوجی امریکی الزامات کی تردید کرتی ہے اور چینی حکومت بھی امریکہ کے رویے کی سخت الفاظ میں مذمت کر چکی ہے۔

یورپ سے سے مزید