آپ آف لائن ہیں
اتوار2؍صفر المظفّر 1442ھ 20؍ستمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

اسلام آباد پولیس نے امریکی سفارتخانے کا بیان مسترد کر دیا

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کی پولیس نے امریکی سفارت خانے کی جانب سے دارالحکومت میں اسٹریٹ کرائم میں حالیہ اضافے کے بارے میں جاری کیئے گئے بیان کو مسترد کر دیا ہے اور کہا ہے کہ یہ معلومات مفروضوں پر مبنی ہے جبکہ مذکورہ علاقوں میں اس طرح کا کوئی واقعہ نہیں ہوا ہے۔

اسلام آباد پولیس کے ترجمان نے امریکی سفارتِ خانے کے بیان کی سختی سے تردید کرتے ہوئے مزید کہا ہے کہ دارالحکومت میں گزشتہ سالوں کے مقابلے میں اسٹریٹ کرائمز اور دیگر جرائم کی شرح میں کمی دیکھی گئی ہے۔

ڈپٹی کمشنر اسلام آباد حمزہ شفقات نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری کیئے گئے بیان میں کہا ہے کہ میں پچھلے تین سالوں کے اعداد و شمار کا موازنہ شیئر کر رہا ہوں۔

انہوں نے کہا ہے کہ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ اسلام آباد میں امن و امان کی صورتِ حال کو جان بوجھ کر خراب پیش کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے، ہر ایک دیئے گئے اعداد و شمار کی خود جانچ پڑتال کر کے فیصلہ کر سکتا ہے۔

واضح رہے کہ اسلام آباد میں واقع امریکی سفارت خانے نے امریکی شہریوں کو جاری  کیئے گئے بیان کے ذریعے خبردار کیا ہے کہ وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں اسٹریٹ کرائم میں حالیہ دنوں میں اضافے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔

جاری کیئے گئے بیان میں امریکی سفارت خانے کا کہنا ہے کہ زیادہ تر جرائم کے واقعات اسلام آباد کے سیکٹر G-6، F-6، F-7، F-10، I-9، اور I-10 میں ہوئے ہیں، ان وارداتوں میں اسٹریٹ کرائم، چوری، مسلح ڈکیتی کی وارداتیں، موبائل فون، پرس اور گاڑیوں کی چوری شامل ہے۔

یہ بھی پڑھیئے:۔

اسلام آباد پولیس کا جرائم میں کمی کا دعویٰ ، رپورٹ وزیر داخلہ کو پیش

بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکی شہریوں کو یاد دلایا جاتا ہے کہ جرائم کے بارے میں اطلاع دینے پر پولیس کا ردِعمل مختلف ہو سکتا ہے۔

امریکی سفارت خانے نے کہا ہے کہ دارالحکومت کے بتائے گئے سیکٹرز میں سفر کرنے والے امریکی شہری خاص طور پر بازاروں کا دورہ کرتے وقت احتیاط برتیں اور چوکس رہیں۔

یہ بھی پڑھیئے:۔

6ماہ میں جرائم کی شرح میں کمی ہوئی،اسلام آباد پولیس کا دعویٰ

امریکی شہریوں کو ہدایت دی گئی ہے کہ ان علاقوں میں جاتے وقت خود کہ کم حیثیت ظاہر کریں، دولت مند ہونے کی نشانیاں ظاہر نہ کریں، جیسا کہ قیمتی زیورات یا گھڑیاں وغیرہ نہ پہنیں، بینک اور اے ٹی ایم آتے جاتے محتاط رہیں، اپنے اردگرد سے خبردار رہیں، سیف ٹریولر انرولمنٹ پروگرام میں خود کو انرول کرا کے سیکیورٹی اپ ڈیٹس حاصل کریں۔

قومی خبریں سے مزید