آپ آف لائن ہیں
ہفتہ19؍ربیع الثانی 1442ھ 5؍دسمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کنگنا نے کرن جوہر کو گندگی پھیلانے پر آڑے ہاتھوں لے لیا

بالی ووڈ کی سپر ہٹ فلم ’کوئین‘ کی اداکارہ کنگنا رناوت نے ہدایت کار کرن جوہر اور اداکارہ دپیکا پڈوکون کو فلم کی شوٹنگ کے بعد گاؤں میں گندگی پھیلانے پر آڑے ہاتھوں لے لیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق بالی ووڈ کی پنگا کوئین کنگنا سوشل میڈیا پر کافی سرگرم رہتی ہیں اور اکثر اپنے خیالات کا کھل کر اظہار کرتی دکھائی دیتی ہیں۔

حال ہی میں انہوں نے ایک ویڈیو پر اپنا سخت رد عمل ظاہر کیا ہے، جس میں دعوٰی کیا گیا ہے کہ کرن جوہر کی کمپنی دھرما پروڈکشن گوا کے ایک گاؤں میں شوٹنگ کے بعد بایومیڈیکل ویسٹیج وہیں چھوڑ کر واپس آگئی ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اداکارہ کنگنا رناوت نے ایک ٹوئٹ کیا ہے جس میں انہوں نے مرکزی وزیر پرکاش جاودیکر اور ان کی وزارت کے آفیشیل ہینڈل کو ٹیگ کیا ہے اور کہا ہے کہ فلم انڈسٹری نہ صرف ملک کے اخلاقی اقدار اور کلچر کے لیے وائرس ہے بلکہ یہ ماحولیات کے لیے بھی نقصان دہ اور خطرناک بن گئی ہے۔

اداکارہ نےکرن جوہر کی جانب سے پھیلائی گئی گندگی کی ایک تصویر بھی اپنے ٹوئٹ کے ساتھ شیئر کی ہے، جس کے ساتھ انہوں نے مزید لکھا کہ ایک بڑے پروڈکشن ہاؤس کے اس غیر ذمہ دارانہ رویہ کو دیکھئے اور اس سلسلے میں براہ مہربانی میری مدد کریں۔

کنگنا رناوت کی جانب سے یہ رد عمل اُس وقت سامنے آیا جب ایک صارف نے ایک نیوز ہیڈلائن کا اسکرین شاٹ شیئر کیا ، جس میں کہا گیا تھا کہ دھرما پروڈکشن نے مبینہ طور پر گوا میں واقع ایک گاؤں میں دپیکا پڈوکون کے ساتھ فلم کی شوٹنگ ختم کرنے کے بعد کس قدر گندگی پھیلائی ہے۔

کنگنا رناوت سے قبل ’لوکھانچو ایکواٹ گوا‘ نامی ایک این جی او بھی کرن جوہر سےگندی پھیلانے کے معاملے پر تحریری معافی نامہ مانگ چکی ہے۔ این جی او کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ اگر کرن جوہر کی طرف سے جواب نہیں آتا تو اگلے ہفتے ممبئی ہائی کورٹ میں عرضی داخل کی جائے گی۔

واضح رہے کہ کرن کی ٹیم نے گوا کی راجدھانی پنجی سے 10 کلو میٹر دور نیرول نامی گاؤں میں شوٹنگ کے بعد استعمال شدہ پی پی ای کٹس اور دیگر گندگی پھیلائی تھی۔ 

انٹرٹینمنٹ سے مزید