کراچی، سال رواں میں نقب زنی کی سب سے بڑی واردات
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

کراچی، سال رواں میں نقب زنی کی سب سے بڑی واردات

کراچی (اسٹاف رپورٹر)سال رواں میں نقب زنی کی سب سے بڑی واردات رونما ہوئی ۔ ملزمان سنار کی دکان سے تقریباً12کلوطلائی زیورات لیکر فرار ہوگئے جس کی مالیت 10کروڑ سے زائد بتائی جاتی ہے ۔ تفصیلات کے مطابق کلفٹن گلف شاپنگ مال میں نقب زنی کی واردات رونما ہوئی جس میں ملزمان مبینہ طور پر دکان میں موجود 12 کلو وزنی طلائی زیورات لیکر فرار ہوگئے ۔ دکان کے مالک محمد آصف ابدانی نے پولیس کو بتایا کہ اسکی دکان گلف شاپنگ مال میں قائم ہے اور پیر کی شب اپنی دکان بند کر کے گھر چلا گیا اسکی دکان میں 4 کاؤنٹرز ہیں جس میں تیار طلائی زیورات سجا کر رکھے جاتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ منگل کو جب وہ صبح اپنی دکان پہنچا تو دیکھا کہ اسکی دکان کے تالے اور شٹر کٹے ہوئے ہیں اور اندر جاکر دیکھا تو ملزمان تمام طلائی زیورات لیکر فرار ہوگئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شبہ ہے کہ انکی دکان میں نقب زنی کی واردات رونما ہوئی ہے ۔ پولیس نے جائے وقوعہ پر پہنچ کر معائنہ کیا اور تمام تفصیلات جمع کیں، پولیس نے واقعے کا مقدمہ نمبر 201/2021نامعلوم ملزمان کے خلاف درج کر کے تفتیش شروع کردی ہے ،دکاندار کا کہنا ہے کہ مذکورہ طلائی زیورات کی مالیت 10 کروڑ روپے سے زائد ہے پولیس کا کہنا ہے کہ مارکیٹ میں نصب کیمروں کی مدد لی جارہی ہے اور وہاں کے سیکورٹی ڈپارٹمنٹ سے بھی معلومات حاصل کی جارہی ہیں۔

اہم خبریں سے مزید