• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

مصنوعی اشاریوں کے بجٹ کا زمینی حقائق سے کوئی تعلق نہیں، سراج الحق

امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے بھی حکومتی بجٹ پر تنقید کی ہے اور کہا کہ مصنوعی اشاریوں کے بجٹ کا زمینی حقائق سے کوئی تعلق نہیں۔

لاہور سےجاری بیان میں سراج الحق نے کہاکہ بیرونی قرضوں کے پہاڑ نے قوم کی کمر توڑ دی ہے، بجٹ سے 3060 ارب سود کی ادائیگی میں چلے جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ تنخواہوں میں 30 فیصد اضافہ ہونا چاہیے تھا، مزدور کی کم سے کم اجرت 30 ہزار مقرر کی جائے۔

امیر جماعت اسلامی نے مزید کہاکہ ریلوے، پی آئی اے کی بحالی کے لئے کوئی پروگرام نہیں دیا گیا، حکومت قومی اداروں کو اونے پونے داموں بیچنا چاہتی ہے۔

اُن کا کہنا تھاکہ مہنگائی اور بے روزگاری کے خاتمے کا واضح پروگرام نہیں دیا گیا، مصنوعی اشاریوں کے بجٹ کا زمینی حقائق سے کوئی تعلق نہیں۔

سراج الحق نے یہ بھی کہا کہ بجٹ پی ٹی آئی کے منشور اور وعدوں کی تکمیل پر خاموش ہے، آئی ایم ایف سے مذاکرات کے بعد منی بجٹ آنے کا خدشہ ہے۔

قومی خبریں سے مزید