• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

عثمان مختار کو ہراساں اور دھمکیاں دینے والی خاتون کون؟

اداکار عثمان مختار کو ہراساں، بلیک میل اور دھمکیاں دینے والی خاتون آرٹسٹ خود منظرِ عام پر آگئیں۔

عثمان مختار کی جانب سے نام ظاہر کیے بغیر ایک خاتون آرٹسٹ پر گزشتہ ڈیڑھ برس سے ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا گیا تھا۔

عثمان مختار کی جانب سے لگائے گئے الزامات کے بعد مہروز وسیم نامی خاتون ڈائریکٹر کی جانب سے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ سے ایف آئی اے کے لیے لکھے گئے ایک بیان کو شیئر کیا گیا۔


خاتون کی جانب سے  ایف آئی اے کے نام لکھے گئے بیان پر عثمان مختار کا نام درج ہے۔

بیان میں خاتون نے دعویٰ کیا کہ انہوں نے 2016 میں عثمان مختار کو ’آزاد‘ نامی گانا بنانے کے لیے بطور ڈائریکٹر کاسٹ کیا تھا۔

ایف آئی اے کے نام لکھے گئے بیان کو شیئر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’یہ میرا ذاتی بیان ہے جس کے بعد عثمان مختار نے میرے خلاف دائر کردہ مجرمانہ ہتک عزت کا مقدمہ چلانے سے انکار کردیا تھا۔‘

خاتون ڈائریکٹر کا اپنے بیان میں کہنا ہے کہ اداکار عثمان مختار گھریلو حالات کے باعث پریشانیوں کا شکار تھے اور وہ کام کرنے کے بجائے خواتین سے متعلق گفتگو میں مصروف رہتے تھے۔

انہوں نے کہا کہ بعدازاں اداکار کی جانب سے وقت پر کام مکمل نہ ہونے کی صورت میں انہوں نے اپنا گانا خود ہی بنالیا۔

خاتون ڈائریکٹر نے دعویٰ کیا کہ اداکار نے مجھ پر بے تکے الزام لگاتے ہوئے ایف آئی اے میں درخواست دائر کی۔

انٹرٹینمنٹ سے مزید