• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
ہم سب کو اللّٰہ رب العزت نے پیدا کیا ہے اور ہم سب کو ایک دن موت کا مزہ چکھنا ہے۔ اور خالقِ حقیقی کے سامنے اپنے اعمال کی جواب دہی کرنا ہے۔ میں چند دنوں سے سخت بیمار ہوں۔ علاج جاری ہے۔ گناہ گار ہوں۔ دعائے مغفرت کرتا رہتا ہوں۔ آپ سب سے درخواست ہے کہ میری صحتیابی کی دُعا کریں۔ میری وفات کے بعد پورے پاکستان کے ہر شہر، ہر گائوں، ہر گلی کوچے میں آپ نے میرے لئے نماز جنازہ پڑھنا ہے اور دعائے مغفرت کرنا ہے۔ میں نے دل و جان، خون، پسینہ سے ملک و قوم کی خدمت کی ہے جو کہا گیا اس پر عمل کیا کوئی غلط کام نہیں کیا اور نا ہی میرے محب وطن ساتھیوں نے کوئی غلط کام کیا۔ میرا اللّٰہ میرا گواہ ہے میں جہاں چاہتا چلا جاتاکھرب پتی ہوجاتا۔ مجھے پاکستان عزیز تھا، آپ عزیز تھے، آپ کی حفاظت و سلامتی میرا فرض تھا میں دسمبر 1971 کو کبھی نا بھلا سکا۔
والسّلام ۔ طالب دُعا۔ آپکا ڈاکٹر عبدالقدیر خان
(نوٹ) آپ نے محسن پاکستان، محافظ پاکستان کے القاب سے نوازا ہے۔ تہہ دل سے شکرگزار ہوں۔ پاکستان زندہ باد!