• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن


قومی ٹیسٹ ٹیم کے اوپنر عابد علی نے کہا ہے کہ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) مینز ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ ہمارے لیے بڑی اہم ہے، پہلا ٹیسٹ ہم نے جیت لیا ہے ، اب دوسرے ٹیسٹ میچ کو دیکھ رہے ہیں۔

انہوں کا کہنا تھا کہ ہماری کوشش ہے کہ ٹیسٹ چیمپئن شپ کے پوائنٹس ٹیبل میں اوپر کی طرف بڑھتے جائیں، میں دوسرے ٹیسٹ میچ میں بھی اسی مومنٹم کو لے کر چلوں گا، یہ پرفارمنس اب ماضی کا حصہ بن چکی، ڈھاکہ میں بھی پازیٹو مائنڈ سے کھیلنا ہے۔

عابد علی نے مزید کہا کہ عبدﷲ شفیق کو ڈبیو کرنے پر مبارکباد دیتا ہوں ،وہ بہت اعتماد کے ساتھ کھیلے ہیں ،ہم دونوں کا پلان یہی تھا کہ وکٹ پر ٹھہرنا ہے، بیٹنگ کے دوران ایک دوسرے کی غلطیاں بتاتے رہے۔

ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ مین آف دی میچ بننے کی بہت خوشی ہے ، مین آف دی میچ بننے کا کریڈٹ ڈومیسٹک میں کھیلنے کو جاتا ہے ،ڈومیسٹک کرکٹ کھیلنے سے مجھے اعتماد ملا ہے ۔

 انہوں نے کہا کہ پہلی اننگز میں سنچری مکمل کی، دوسری میں نہ کر سکا لیکن یہ کھیل کا حصہ ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان نے پہلے ٹیسٹ میچ میں بنگلادیش کو 8 وکٹوں سے شکست دے دی۔ عابد علی کو پلیئر آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا، انہوں نے پہلی اننگز میں 133 اور دوسری میں91 رنز بنائے۔

کھیلوں کی خبریں سے مزید