• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

یوکرینی آرٹسٹ کی تخلیق، منفرد ماسک تیار کرلیے

فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا
فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا

یوکرین کے ایک فنکار دیمتری براگین نے منفرد قسم کے ماسک تیار کیے ہیں، وہ اس نوعیت کے ماسک کی تیاری میں خصوصی مہارت رکھتے ہیں۔

اس ماسک کے پہننے سے انسان مشین زیادہ لگتا ہے گو کہ نگاہوں کو دنگ کردینے والی ان کی یہ تخلیق تیکنیکی طور پر اسٹیم پنک یا بھاپ کی توانائی سے چلنے والے ماسک نہیں ہیں کیونکہ یہ حرکت کرنے والے اجزا پر مشتمل نہیں ہے۔

فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا
فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا

تاہم یہ بات واضح ہے کہ افسانوی سائنسی ادب پر مبنی یہ تخلیق، اس حوالے سے تحریک پیدا کرنے میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔

یاد رہے کہ انیسویں صدی کے وکٹورین عہد میں سائنسی ادب میں ایک ایسے معاشرے کا تصور غالب تھا جہاں پر تاریخی طور پر  بھاپ سے چلنے والی ٹیکنالوجی کا تصور موجود تھا۔ 

اس باصلاحیت آرٹسٹ نے ایک ہلکے سے پلاسٹک ماسک سے اپنے کام کا آغاز کیا، جسے کوئی شکل دینا آسان ہوتا ہے جس کے بعد اس نے اس میں ہر قسم کی سجاوٹ کے عنصر کو شامل کرکے اسے پہننے کے قابل ماسک میں تبدیل کیا، جو کہ آپ کے سامنے ہے۔

فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا
فوٹو بشکریہ سوشل میڈیا

اس مقصد کے لیے اس نے جو اشیا استعمال کی ہیں ان میں موٹرسائیکل کے پارٹس، کیمروں کے ناکارہ لینس اور بچوں کے دھاتی کھلونوں کے اجزا شامل ہیں، جنھیں دیکھ کر آپ قطعی طور پر یہ نہیں کہہ سکتے کہ اس میں یہ چیزیں استعمال کی گئی ہیں۔

دلچسپ و عجیب سے مزید