• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
کراچی( طاہر عزیز/اسٹاف رپورٹر) حکومت سندھ نے کراچی ماسٹر پلان 2047کی تیاری کا آغاز کر دیا اس کی مدت کی تعین قیام پاکستان کی تاریخ سے کیا گیا ہے ماسٹر پلان کسی بھی شہر کی زمین کے موجودہ استعمال کو کو مدنظر رکھتے ہوئے آئندہ آبادی کے لحاظ سےڈویلپمنٹ کی سفارشات تیار کرتا ہے اس اسلسلے میں گزشتہ روز سیکرٹری لوکل گونمنٹ کی زیر صدارت اجلاس ہوا جس میں منصوبے کے پی سی ٹوپر غور کے لئے آٹھ رکنی کمیٹی تشکیل دی گئی جس کے چیئر مین اور ممبران میں ایس بی سی اے،کے ڈی اے،ماسٹر پلان ڈپارٹمنٹ، ایل ڈی اے، ایم ڈی اے سمیت دیگر اداروں سے نمائندے شامل کئے گئے ہیں جمعرات کو اس کمیٹی کا بھی پہلا اجلاس منعقد ہو ا کے ڈی اے کے سینئر اور غیرملکی اداروں کے ساتھ کام کا وسیع تجربہ رکھنے وا لے افسر نعیم وحید کو پروجیکٹ ڈائریکٹر تعینات کیا گیا ہےآخری ماسٹر پلان 2007میں سابق سٹی ناظم مصطفیٰ کمال کے دور میں منظور کیا گیا تھا جس کی مدت 2020تک تھی تاہم اس ماسٹر پلان پر تیزی سے کام نہیں کیا گیا کمیٹی کے اجلاس میں کئے جانے والے فیصلے کے مطابق کنسلٹنٹ ہائر کرنے کے لئے ٹی او آر بنائے جا ئیں گے کنسلٹنٹ منتخب ہوتے ہی اس کی فزیبلٹی اور ڈیزائن کی تیاری شروع ہو جائے گی کراچی ماسٹر پلا ن کی تیاری پر لاگت کا تخمینہ ایک ارب 69 کروڑ روپےلگایاگیا ہے جو کلک کی زیرنگرانی ورلڈ بنک فراہم کرے گا۔
اہم خبریں سے مزید