آپ آف لائن ہیں
منگل11؍صفر المظفّر 1442ھ 29؍ستمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

انسانی حقوق تنظیم کا بھارت سے مقبوضہ وادی میں اظہارِ رائے پر عائد پابندیاں ہٹانے کا مطالبہ

انسانی حقوق تنظیم ہیومن رائٹس واچ نے مقبوضہ کشمیر میں جاری بھارت کے جبری تسلط پر سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے بھارت سے وادی میں آزادی اظہار رائے پر عائد پابندیاں ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔

ہیومن رائٹس واچ نے مقبوضہ وادی میں انٹرینٹ سروسز بحال کرنے، انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں میں ملوث افراد کا احتساب کرنے اور وادی میں غیر منصفانہ پالیسیوں کو ختم کر کے استحصال کا شکار کشمیریوں کو فوری انصاف فراہم کرنے کا مطالبہ کر دیا۔

انسانی حقوق تنظیم کا کہنا ہے کہ بھارتی حکومت کی جانب سے کشمیر کے مسلمانوں کا مسلسل استحصال جاری ہے، بھارت نے کشمیر کے مسلمانوں کے خلاف سخت اور امتیازی پابندیاں عائد کررکھی ہیں۔

تنظیم کا کہنا ہے کہ مقبوضہ وادی میں اظہار رائے کی آزادی، معلومات اور صحت کی سہولیات کا شدید فقدان ہے، کورونا وبا نے وادی کے لوگوں کی مشکلات کا شکار زندگی کو مزید مشکل بنادیا ہے۔

ہیومن رائٹس واچ کا مزید کہنا ہے کہ بھارت نے ایک سال پہلے وادی میں پابندیاں لگا کر سیکڑوں بچوں سمیت ہزاروں افراد کو غیرقانونی طور پر گرفتار کیا، بھارت فوری طور پر سیاسی قیدیوں کو رہا کر کے صحافیوں اور سماجی کارکنوں کے خلاف مقدمات ختم کرے۔

بین الاقوامی خبریں سے مزید