آپ آف لائن ہیں
اتوار7؍ ربیع الاوّل1442ھ 25؍اکتوبر2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

دار چینی کے استعمال کے حیرت انگیز فوائد

ہر گھر کے کچن میں با آسانی دستیاب دار چینی کے بے شمار فوائد ہیں،  دار چینی کے چند حیرت انگیز فوائد سے ابھی بھی لوگ ناواقف ہیں جس کے نتیجے میں دار چینی کو صحیح استعمال میں بھی نہیں لایا جاتا ہے۔

گرم مسالے میں شمار کی جانے والی دار چینی ایشیا کے ہر گھر میں استعمال کی جاتی ہے، دار چینی درخت کی ایک چھال ہے جسے مختلف کھانوں میں مسالے کے طور پر استعمال کیا جاتا ہے، یہ سب سے زیادہ پاکستان، سری لنکا، بھارت، چین اور افریقہ کے مختلف حصوں میں پائی جاتی ہے ۔

صحت کے لیے نہایت مفید دار چینی کے 100 گرام میں 274 کیلوریز پائی جاتی ہیں جبکہ اس میں 10 ملی گرام سوڈیم، 431 گرام پوٹاشیم، 81 گرام کاربوہائیڈرایٹس، 2.2 گرام شکر اور 4 گرام پروٹین پائی جاتی ہے ۔

اسی طرح دار چینی کے100 گرام میں میں 5 فیصد وٹامن اے، 6 فیصد وٹامنس سی، 100 فیصد کیلشیم، 46 فیصد آئرن، 15 فیصد میگنیشیم اور 10 فیصد وٹامن بی 6 پایا جاتا ہے ۔

دار چینی استعمال کرنے سے مجموعی صحت پر کیا اثرات مرتب ہوتے ہیں ؟

وزن میں کمی

دار چینی کو وزن میں کمی کے خواہشمند افراد کے لیے آئیڈیل مانا جاتا ہے، اس کے استعمال سے پیٹ کی چربی گھُلنے لگتی ہے اور اضافی وزن میں بھی کمی آتی ہے۔

وزن میں کمی کے لیے اسے دو طریقوں سے استعمال کیا جا سکتا ہے، صبح نہار منہ دار چینی کے ایک ٹکڑے کو گرم پانی میں ڈال کر 15 منٹ کے لیے کھ دیں اور نیم گرم ہونے وپر پی لیں ، دار چینی کو پانی میں ابالنے سے گریز کریں۔

اگر گرم مشروبات پینا پسند نہیں تو دار چینی کے ایک انچ کے ٹکڑے کو رات میں کسی کانچ یا اسٹیل کے ایک گلاس پانی میں ڈال کر رکھ دیں اور صبح نہار منہ اس پانی کو پی لیں۔

پلاسٹک کا برتن استعمال کرنے سے گریز کریں ۔

شوگر کے مریضوں کے لیے مفید

دار چینی خون میں موجود شوگر کے لیول کو متوازن رکھنے میں مدد دیتی ہے، انسولین کی مثبت افزائش کے سبب دار چینی ذیابیطس کا ایک مؤثر علاج ہے۔

شوگر کے مریضوں کے استعمال کے لیے دار چینی کوکھانے میں استعمال کیا جاسکتا ہے۔

کینسر جیسی مہلک بیماری کا علاج

دار چینی پر کی گئی ایک تحقیق کے نتیجے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ دار چینی کینسر کا بہترین علاج ہے، 2010ء میں کی گئی ایک تحقیق کے مطابق دار چینی جسم میں تیزی سے کینسر کے خلیات بننے کے عمل کو روکتی ہے۔

صحت مند ہڈیاں

دار چینی میں آئرن اور کیلشیم کی بھر پور مقدار پائے جانے کے سبب ہڈیوں کی صحت بہتر ہوتی ہے،اس کے باقاعدہ استعمال سے بڑھاپے میں بھی ہڈیاں کمزور نہیں ہوتیں اور نا ہی ہڈیوں میں  درد ہوتا ہے۔

قدرتی اینٹی آکسیڈنٹ جز

دار چینی ایک قدرتی اینٹی آکسیڈنٹ جز ہے جس کے استعمال سے جسم میں موجود مضر صحت اجزا کا صفایا ہوتا ہے۔

دار چینی مضر صحت مادوں کے خلاف موثر کردار ادا کرتی ہے جو جسم کے لیے نقصان دہ ثابت ہوتے ہیں۔ 

دار چینی میں موجود اینٹی آکسیڈنٹس اجزا مجموعی صحت کے لیے فائدہ مند ثابت ہوتے ہیں۔

بلڈ پریشر

دار چینی کے استعمال سے بلڈ پریشر بھی قابو میں ر ہتا ہے، تحقیق کے مطابق اگر روزانہ آدھا چائے کا چمچ دار چینی کا استعمال کر لیا جائے تو اس سے بلڈپریشر متوازن سطح پر رہتا ہے ۔

نزلہ زکام اور سردی سے بچاتی ہے

دارچینی کے استعمال سے نزلہ، زکام جیسی وائرل بیماریوں سے بچت رہتی ہے اور یہ سردی کی شدت میں بھی کمی لاتی ہے، دار چینی کے استعمال سے تیز بخار کو بھی کم ہونے میں مدد ملتی ہے۔

صحت سے مزید