Dr Lubna Zaheer - Urdu Columns Pakistan | Jang Columns
| |
Home Page
منگل 26 محرم الحرام 1439ھ 17 اکتوبر 2017ء
ڈاکٹر لبنٰی ظہیر
زیب داستاں
October 14, 2017
حالات کے تقاضے اور ہم

عالمی بنک کی جنوبی ایشیاسے متعلق اقتصادی رپورٹ خبر دیتی ہے کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف کی معزولی سے جنم لینے والی سیاسی بے یقینی کے باعث پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح کم ہونے کا خدشہ ہے۔یعنی وہ معاشی استحکام جوگزشتہ چار برسو ں میں ہمیں نصیب ہوا، سیاسی بے یقینی اور عدم استحکام کی نذر ہونے کا خطرہ ہے۔ دوسری طرف پاک چین اقتصادی...
September 30, 2017
عمران خان کا نیا مطالبہ

خان صاحب کی سیاسی حکمت عملی کا بنیادی نکتہ یہ ہے کہ وہ مسلسل کوئی نہ کوئی مطالبہ کرتے رہیں۔ وہ اس مطالبے کو سیاسی سرگرمی اور گہما گہمی کیلئے استعمال کرتے ہیں۔ جلوس نکالتے ، جلسے کرتے اور ضرورت پڑے تو دھرنے بھی دیتے ہیں۔ اسکا ایک فائدہ تو یہ ہوتا ہے کہ انکے کارکنان کا لہو گرم رہتا ہے اور دوسرا یہ کہ وہ خود ایک اپوزیشن لیڈر کے طور پر...
September 16, 2017
حلقہ 120 کا انتخاب: ایک بڑا سیاسی معرکہ

کہتے ہیں اور شاید ٹھیک ہی کہتے ہیں کہ سیاست بے یقینی کاکھیل ہے۔ کسی بھی وقت کوئی بات حتمی طور پر نہیں کہی جاسکتی۔ ان دنوں پورے پاکستان کی نظریں لاہور کے قومی اسمبلی کے حلقہ120 پر جمی ہیں۔ کہنے کو تویہ محض ایک ضمنی انتخاب ہے۔2013کے بعد سے بیسیوں ضمنی انتخابات ہو چکے ہیں۔ سو اس لحاظ سے یہ معمول کی ایک سیاسی سرگرمی سمجھی جانی چاہیے لیکن...
September 09, 2017
جذباتیت یا حکمت؟

میانمار(برما) میں روہنگیا مسلمان بد ترین مظالم کا نشانہ بنے ہوئے ہیں۔ ایسا پہلی بار نہیں ہوا۔ ماضی میں بھی حکومتی اور سرکاری سر پرستی میں انکے خلاف آپریشن ہوتے رہے ۔ گزشتہ کئی دہائیوں سے انکی نسل کشی، معاشی اور سماجی استحصال کا یہ سلسلہ جاری ہے۔ روہنگیا مسلمانوں کا قتل عام اور خواتین کی عصمت دری معمول کے واقعات ہیں۔ کہنے کی حد تک...
September 02, 2017
لاہور کا انتخابی معرکہ

قومی اسمبلی کے حلقہ NA-120میں انتخابی مہم کا آغاز ہو چکا ہے۔ نامزد امیدوار اور سیاسی کارکنان، پارٹی اجلاس، جلسے جلوس اور ریلیوں کے انعقاد میں مصروف ہیں۔ اس وقت حلقے میں چار نمایاں سیاسی جماعتیں نظر آتی ہیں۔ مسلم لیگ (ن)، تحریک انصاف، پی پی پی اور جماعت اسلامی۔ تاہم اصل مقابلہ مسلم لیگ (ن) اور تحریک انصاف کے مابین ہونا ہے۔ یہ کہنا...
August 26, 2017
اللہ ہمارے حال پر رحم کرے

اردوکا ایک محاورہ ہے ’’گھر پھونک، تماشا دیکھ‘‘۔ یہ محاورہ ہم پر پوری طرح صادق آتا ہے۔ ابھی ابھی ہم نے سترویں سالگرہ اپنی آزادی کی منائی ہے۔ ستر سال کچھ کم عرصہ نہیں ہوتا۔ ہمارے ہی ساتھ یا آس پاس آزاد ہونے والے ممالک کے ہاں ایک طرف تو بڑے مضبوط اور مستحکم سیاسی و حکومتی نظام قائم ہو گئے ہیں اور دوسری طرف وہ تیز رفتاری کے ساتھ...
August 12, 2017
کیا جواب ملے گا؟

سابق وزیر اعظم نوازشریف، عہدے سے فارغ ہوتے ہی عوام میں آگئے ہیں۔ 28 جولائی کو سپریم کورٹ نے انکی نا اہلی کا فیصلہ سنایا۔ توقع کے بر عکس انہوں نے کسی تلخ رد عمل کا مظاہرہ نہیں کیا۔ صرف اپنے رفقاء سے مشورہ کیا۔ اپنی پارٹی سے رابطہ کیا۔ پارلیمانی پارٹی کا اجلاس بلایا۔ شاہد خاقان عباسی کو بطور وزیر اعظم نامزد کیا۔ وہ اس وقت تک مری اور...
July 29, 2017
تعلیمی نظام اور ہماری ترجیحات

تعلیم کو افراد اور اقوام کی ترقی کا ضامن سمجھا جاتا ہے۔ دنیا میں انہی قوموں نے ترقی کی جنہوں نے تعلیم کو اپنا ہتھیار بنایا ۔ افراد کی مثال بھی اسی طرح ہے۔ تعلیم جیسے ہتھیار نے بہت سوں کی قسمت بدل کر رکھ دی۔ ہمارے ارد گرد ایسی سینکڑوں مثالیں موجود ہیں کہ کس طرح تعلیم جیسے خزانے نے لوگوں کو غربت کی زندگی سے نکال کر اعلیٰ ترین مناصب پر...
July 22, 2017
پانامہ کا ہنگامہ، میڈیا اور انتخابی اصلاحات

پانامہ لیکس کا معاملہ اب حتمی مرحلے میں ہے۔ جج صاحبان نے دلائل سننے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا ہے۔چند روز میں اس مقدمے کے تمام پہلوئوں کا جائزہ لینے کے بعد، معزز جج صاحبان پیش کردہ شواہد اور دلائل کی روشنی میں ، قانون و انصاف کے تقاضوں کےمطابق فیصلہ سنائیں گے۔ تاہم اس بڑی عدالت کے باہر کئی عدالتیں لگی ہیں۔ فیصلے صادر ہو رہے ہیں۔...
July 15, 2017
وزیراعظم کیوں مستعفی ہوں؟

جے آئی ٹی کی رپورٹ، فیصلہ نہیں ہے۔ حتمی فیصلے کا اختیار سپریم کورٹ کے پاس ہے۔ معزز جج صاحبان کو پیش کردہ شواہد کا جائزہ لینے اور فریقین کا موقف سننے کے بعد کوئی فیصلہ کرنا ہے۔ سیاسی جماعتیں مگر عجلت میں دکھائی دیتی ہیں۔ وزیر اعظم نواز شریف کے استعفیٰ کے مطالبے پر اپوزیشن جماعتیں یک زبان اور یک جہت ہیں۔ یوں تو پارلیمنٹ جیسا اہم...
July 12, 2017
گھر پھونک، تماشا دیکھ

جے آئی ٹی اپنی حتمی رپورٹ سپریم کورٹ آف پاکستان میں جمع کروا چکی ہے۔ اب عدالت عظمیٰ شواہد کی روشنی میں اس معاملے کا جائزہ لیکر حتمی فیصلہ کرے گی۔ چاہئے تو تھا کہ رپورٹ پیش ہونے کے بعد، وہ طوفان کسی طور تھم جاتا، جو کئی مہینوں سے سیاسی اور صحافتی سطح پر بپا ہے۔ اچھا ہوتا کہ حکومت، اپوزیشن اور میڈیا غیرضروری قیاس آرائیوں اور...
July 03, 2017
اور اب مریم نواز شریف بھی …

جے آئی ٹی نے مریم نواز شریف کو بھی طلب کر لیا ہے۔ امید کی جا رہی تھی کہ وزیر اعظم نواز شریف ، انکے بیٹوں، کزن اور انکے بھائی ، وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف سے پوچھ گچھ کرنے کے بعد ، جے آئی ٹی شریف خاندان کی خواتین کو حاضری سے مستثنیٰ رکھے گی۔ اس خوش گمانی کی وجہ یہ تھی کہ ہمارے سماج میں لاکھ خرابیاں سہی، مگر آج بھی ہمارے ہاں خواتین...
June 24, 2017
پاناما، میڈیا اور بے یقینی

علامہ اقبال نے " بے یقینی" کو غلامی سے بھی بد تر قرار دیا تھا۔بے یقینی انسان اور قوم کو شکوک و شبہات میں مبتلا کر کے اسکی صلاحیتوں اور قوتوں کو کھا جاتی ہے۔ بے یقینی کی فضا اسلئے بھی نہایت مہلک ہوتی ہے کہ ہر شے اپنی جگہ رک جاتی ہے اور حکومتیں مفلوج ہو کے رہ جاتی ہیں۔ پاکستان اس لحاظ سے بد قسمت ملک ہے کہ اسکی پوری تاریخ اکثر و بیشتر بے...
June 17, 2017
جے آئی ٹی کی ساکھ

وزیر اعظم نواز شریف مشترکہ تحقیقاتی ٹیم کے سامنے اپنا موقف پیش کر چکے ہیں۔ وہ تین گھنٹے تک جے آئی ٹی کے سوالات کے جوابات دیتے رہے۔ یہ پاکستان کی تاریخ کا اہم واقعہ ہے، جو جمہوریت کی سر بلندی اور آئین و قانون کی بالا دستی کی طرف اشارہ کرتا ہے ۔ وزیراعظم نے پہلی بار بڑے واضح اور دو ٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ وہ پنجاب کے وزیر اعلیٰ رہے...