آپ آف لائن ہیں
جمعرات24؍ذیقعد 1441ھ16؍جولائی2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

بلاول کی پمز اسپتال میں والد سے ملاقات

سابق صدر اور پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری سے ان کے صاحبزادے، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری اور وزیرِاعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے پمز اسپتال میں ملاقات کی ہے۔

اس موقع پر بلاول بھٹو زرداری اور مراد علی شاہ نے سابق صدر آصف زرداری سے ان کی صحت کے متعلق دریافت کیا۔

اس سے قبل وزیرِ ریلوے شیخ رشید کا سابق صدر کے حوالے سے بیان سامنے آیا تھا کہ آصف علی زرداری سمیت تمام کے تمام لوگ پلی بارگین کی طرف جا رہے ہیں، اس لیے زرداری اور فریال تالپور کے معاملات بھی جلد طے پا جائیں گے۔

واضح رہے کہ اسلام آباد کے پمز اسپتال میں آصف زرداری کا علاج جاری ہے، ڈاکٹروں کے مطابق ان کے پلیٹ لیٹس نارمل ہونا شروع ہوگئے ہیں۔

سابق صدر آصف علی زرداری کے پلیٹ لیٹس 1 لاکھ 35 ہزار تک پہنچ گئے تاہم کمزوری اور شوگر کے باعث ہاتھوں میں کپکپاہٹ کی شکایت ہے۔

پرانے اسٹنٹ کی وجہ سے سابق صدر کے دل کے وال میں کلاٹ پیدا ہوگیا ہے، جسے نکالنے کے لیے تھیلیئم اسکین کرانا ہوگا، تمام ٹیسٹ کلیئر ہونے تک انہیں اسپتال میں رکھے جانے کا امکان ہے۔

یہ بھی پڑھیئے: سراج الحق کا بلاول کو فون، زرداری کی خیریت دریافت کی

نیب راولپنڈی کی حراست میں موجود آصف زرداری کو 23 اکتوبر کی رات کمر اور گردن کی تکلیف کے باعث پمز اسپتال میں داخل کیا گیا تھا۔

انہیں ڈپریشن، جسمانی کمزوری، گردن اور مہروں میں شدید درد کی بھی شکایت ہے، اس کے علاوہ ان کے غدود میں غیر معمولی اضافے کی تشخیص بھی ہوئی ہے جسے خطرناک قرار دیا گیا ہے۔

پمز اسپتال میں آصف علی زرداری کے وارڈ کو ہی سب جیل کا درجہ دیا گیا ہے۔

قومی خبریں سے مزید