آپ آف لائن ہیں
پیر3؍صفر المظفّر 1442ھ 21؍ستمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

کہا جاتا ہے کہ گیدڑ کا تعلق کتے کےخاندان سے ہےجس کی تین اقسام ہوتی ہیں سنہری گیدڑ، کالے رنگ کا گیدڑ اور ضمنی دھاری والا گیدڑ۔ سنہری گیدڑ شمالی افریقا اور جنوبی وسطی یوریشیا میں پائے جاتےہیں جبکہ ضمنی دھاری دار گیدڑ اور کالے رنگ والے گیدڑ سب صحارا افریقا میں پائے جاتے ہیں۔

گیڈر کے بارے میں چند دلچسپ حقائق:

گیدڑ بہت ساری چیزیں کھاتے ہیں ، مردہ جانوروں سے لے کر دوسرے شکاریوں کے پھلوں اور کیڑے مکوڑوں تک۔سبزی خوروں کی حیثیت سے گیدڑ گوشت اور پودوں دونوں کھانا پسند کرتے ہیں۔ عام طور پر گیڈر درمیانے درجے کے متناسب جانورجیسےخرگوش ، سانپ ، پرندوں اور چھپکلیوں کا شکارکرتے ہیں۔

دن کے وقت، گیدڑ عام طور پر خود کو چُھپا لیتے ہیں کیونکہ وہ شام کو شکار کرتے ہیں۔ بعض اوقات وہ ایک گروہ کی صورت میں شکار کرتے ہیں اور اکثر اکیلے بھی شکار کرتے ہیں۔

عام طور پر مادہ گیدڑ کی حمل کی مدت دو ماہ کے لگ بھگ ہوتی ہےاور مادہ گیڈر اپنے بچوں کو شیر اور چیتے جیسے شکاریوں سے بچانے کے لیے اپنی جگہ بھی تبدیل کرتی ہے۔

کچھ گیدڑ چھوٹے گروپوں میں ایک ساتھ رہتے ہیں جنہیں’ پیک‘ کہاجاتا ہے جبکہ کچھ گیدڑ اکیلے یا جوڑے میں رہتے ہیں۔ پیک میں عام طور پر 6 گیدڑ شامل ہوتے ہیں۔

گیدڑ کو فی الحال انٹرنیشنل یونین فار کنزرویشن آف نیچر ریڈ لسٹ میں کم سے کم تشویش کے طور پر درج کیا گیا ہے لیکن بہت سے دوسرے جنگلی جانوروں کی طرح انہیں بھی رہائش گاہ میں ہونے والے نقصان اور انسانی وائلڈ لائف کشمکش کا خطرہ ہے۔

دلچسپ و عجیب سے مزید