Ajmal Khattak Kashar - Urdu Columns Pakistan | Jang Columns
| |
Home Page
جمعرات18؍ ربیع الثانی 1439ھ 18 ؍ جنوری2018ء
اجمل خٹک کثر
December 31, 2017
ذرا سوچئے

شاید بہت سارے اصحاب اس بات پر یقین نہ کریں کہ یہ مسلمان ہی تھے جنہوں نے عیسائیوں کیلئے بیت المقدس فتح کیا ۔ بیت المقدس تیرہ سو سال مسلمانوں کے قبضے میں رہا۔ عیسائیوں نے اسے واپس لینے کیلئے 12صلیبی جنگیں لڑیںلیکن وہ کامیاب نہ ہوسکے، بالاآخر یہ مسلمان ہی تھے جنہوں نے مسلمانوں کاخون بہایا۔آپ حیران ہونگے کہ آخری صلیبی جنگ میںیہود ،...
December 24, 2017
میں مرجائوں گا

زندگی نشیب و فراز سے عبارت اور غم و خوشی کا استعارہ ہے، ایک دن کا درد بسااوقات برسوں کی راحتوں پر بھاری ہو جاتا ہے ۔شب و روز کی گردش سے مگر کیفیتیں بدلتی رہتی ہیں۔ بس قدرت کی جانب سے استقامت مقدور ٹھہرے تو رنگین و سنگین حالات زیرِ نگیں ہو سکتے ہیں۔ گزشتہ دو ماہ طبیبوں کے دام میں رہا۔ سرجری کا مرحلہ بھی آ یا، واقعہ یہ ہےکہ 2011 میںکالا...
November 26, 2017
خوشحال خٹک و سیکولرازم اور اقبال

( گزشتہ سے پیوستہ)زیر نظر تحریر میں گزشتہ کالم میں زیر بحث دو نکات کی بساط بھر مزید تفہیم کی کوشش کرتے ہیں۔ یعنی خوشحال بابا و سیکولرازم اور حضرت اقبال کی جدت پسند افغان حکمران غازی امان اللہ خان سے وابستہ امیدیں...... واضح یہ کرنا چاہتے ہیں کہ جو لوگ حضرت اقبال کو قرونِ وسطیٰ کے گرداب و سیراب کے تناظر میں اُمہ یا نظریہ پاکستان کے...
November 19, 2017
خوشحال خٹک و سیکولر ازم اور اقبال

حضرت علامہ اقبال نے 1928میں افغانستان کی وزارت تعلیم کو ایک خط لکھا ، جس میں اس بات پر زور دیا کہ وہ شاعر،حکیم، مفکر و فلسفی خوشحال خان خٹک کی تعلیمات کو عام کرنے کی اہمیت کا ادراک کرے۔ اُس وقت افغانستان میں ترقی پسند غازی امان اللہ کی حکومت تھی۔ جب اُنہوں نے   اپنی اصلاحات کو عملی جامہ پہنانا شروع کیا تو فرنگی استعمار نے پیروں اور...
November 12, 2017
سیاست، شاعر اور لاتعلق سماج

روز محشر کیسا ہوگا؟ شاید ناداروں پر یہاں گزرتے ہر دن جیسا ہوگا! میں اس وقت کراچی کے دوسرے بڑے سرکاری، سول اسپتال کے ایمرجنسی گیٹ کے باہر ایمبولینس کے انتظار میں کھڑا ہوں ۔ ہر طرف مریض اور ان کے تیماردار سرگرداں آجارہے ہیں، گویا پورا شہر بیمار ہے۔ پچھلے دنوں ایک پرائیویٹ اسپتال بھی جانا ہوا تھا مگر وہاں ہنگام نہیں سلیقہ تھا،...
October 29, 2017
انتخابات سے قبل چوروں کا احتساب

بہادر و باہمت بے نظیر بھٹو شہید کے نام پر اقتدار کے سنگھاسن پر جا پہنچنے والےکتنے ’بہادر‘ ہیںاس کا اظہار تو گاہے گاہے کوچہ سیاست میں ہوتا رہا ہے لیکن گزشتہ روزایسی ایک فلم نے تو کھڑکی توڑ رش لیا۔عوام کے پونے چھ ارب روپے لوٹنے کے ملزم شرجیل میمن کی بدحواسی، منتوں اور بوکھلاہٹ کو سینکڑوں عینی شاہدین اور ٹی وی اسکرین کے توسط سے ایک...
October 22, 2017
ایک’ ملحد‘ کیوں یاد آتا ہے

ہم جیسے کم علم جو یہ نہیں جانتے کہ سوشلزم اپنے گھر میں یوں کیوں بکھر کر رہ گیا، اس کی وجہ اقتصادی بوجھ تھا،توسیع پسندی، ترقی پذیر ممالک کی بے تحاشا اقتصادی امداد یا پھر سرمایہ دارانہ دنیا کی سازشیں ۔مگر اتنا تو جانتے ہیں کہ یہ وہ انقلاب تھاجس نے 70سال تک ایک جہاں کو متاثر کئے رکھااور جس کا تذکرہ آج بھی عام ہے۔اُس کے قائد نے مساوات...
October 15, 2017
افغانستان، امن کے مصنوعی مرحلے

وائسرائے ہند لارڈکرزن نے کہا تھا ’’جس کسی نے ہندوستان کی تاریخ کا ایک بھی صفحہ پڑھا ہو گا وہ پختون خطے کے مستقبل کےبارے میں پیش گوئی سے گریز کرے گا‘‘ اس رائے کا اظہار انہوں نے 20 جولائی 1904 کو اُس وقت کیا جب وہ وائسرائے کے منصب کے اختتام کے قریب پہنچ گئے تھے۔ معروف مستشرق جیمز ڈبلیو سین اپنی تحقیقی کتابThe Pathan Border Landکا اختتام اگرچہ...
October 08, 2017
انقلابی مسلم لیگ، قیامت کی نشانی

ریاست کے 70سالہ طویل و پر مغز ’جہاد‘ کے طفیل آج اِس اسلامیہ جمہوریہ میں جہاں بڑی بڑی انقلابی جماعتیں ٹھس پھس بلکہ مر کھپ گئی ہیں، تو مسلم لیگ کے اجلاس میں اگر برف ماندہ سرخ و سفید چہروں کے توسط سے فضا میں جوش و ولولہ بکھیرنے کی خاطر آتش نوا تقریریں اور جذبات و گداز برسرِ ہوا کرنے والی شاعری سننے کو ملے، تو کیا اسے صور محشر سے کم...
October 01, 2017
افغان’ جہاد‘ سے خواجہ آصف کے جہاد تک

امریکی صدر ریگن اُس وقت برہم ہوئے جب ایک صحافی نے افغان گوریلوں کو افغان باغی کہا، غصے سے ہانپتے کانپتے امریکی صدر کا اصرار تھا کہ ان کی جنگ Holy War(جہاد) ہے اور یہ مقدس جنگجو ہیں (بحوالہ فلپس بونسکی، پولیٹکل آفیرز مئی 1984) امریکی صدر کی مذکورہ جوشیلی حمایت کے تناظر میں پاکستانی وزیر خارجہ جناب خواجہ محمدآصف کا یہ کہنا کیا غلط ہے کہ...
September 24, 2017
بوڑھا نواز شریف

’’ایک بوڑھا سفر پر روانہ ہوا، راستے میں اس پر چار نوجوانوں نے حملہ کیا اور اس کا سامان لوٹ لیا، غم زدہ بوڑھا آگے روانہ ہوا۔ تھوڑی دور جاکر اس نے گلی کے کونے پر حیرانی کے ساتھ دیکھا کہ ان چار لٹیروں میں سے تین اپنے ساتھی پر ٹوٹ پڑے ، اس سے اس کے حصہ کا مال چھین لیا اور مار کر ایک طرف گرا دیا۔ بوڑھے آدمی کو یہ دیکھ کر خوشی ہوئی اور وہ...
September 17, 2017
لبرل لکھاری، میاں صاحب ومریم نواز

گزشتہ ایک ڈیڑھ ماہ سے مختلف اخبارات میں شائع ہونے والے ایسے بیانات و مضامین اِس طالب علم کے زیر مطالعہ رہے، جو ترقی پسند و سیکولر باالفاظ دیگر لبرل کالم نگاروں یا اپنے میدانوں کے نام ور رہنمائوں کے تھے۔ حیرانی ہوتی ہے جب میاں نواز شریف کی برطرفی مخالف پلڑے میںمحترمہ عاصمہ جہانگیر اور دیگر لبرل اصحاب کاوزن پڑا نظر آتا ہے۔حالانکہ...
September 10, 2017
خیبر پختونخوا، عمران خان کی تجربہ گاہ

بندر کے ہاتھ میں استرا دینا....خدا گنجے کو ناخن نہ دے....ضرب المثل کہاوتیں ہر زباں کے بیاں کی وہ زریں جنتری ہے، دریا کو کوزے میں بند کرنے کاہنر جس میں آراستہ ہے۔یہ لسان در لسان منتقل ہوتی ہر زمانے میں نمایاں چلی جاتی ہیں۔ ایسے مستعمل ان گنت جواہر پاروں سے اندازہ لگایا جاسکتا ہے کہ وہ بزرگ کتنے دانا تھے جن کی یہ عطا ہیں۔ خانِ خاناں...
August 27, 2017
گلالئی، پگڑی اور عمران خان کی امانت

تاریخ کی شہادت یہ ہے۔پگڑی کو وقار واستقلال باچاخان کی درویشی اور جمال وجلال شیرشاہ سوری کی بے باکی نے بخشا۔تاریخ نے لیکن وہ سیاہ دوربھی دیکھا جب ڈالر و ریال پر پلنے والے بھی پگڑی پہنتے تھے۔آج مذہب و قوم فروش بھی پہنتے ہیں اور .....اور عائشہ گلالئی بھی پہننے لگی ہیں۔ صاحبِ سیف و قلم خوشحال خان خٹک کا کہنا مگر یہ ہے کہ پگڑی ہر کوئی...