• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سوشل ہاؤسنگ کے بچوں کیلئے مشترکہ جگہوں پر’’کھیلنے‘‘ کی پابندی

لندن (نمائندہ جنگ) سماجی رہائش کے کرایہ داروں کو لندن سائٹ کی مشترکہ جگہوں پر ان کے بچوں کیلئے’’کھیل پر پابندی‘‘ کی تنبیہ کی گئی ہے۔ دی گارڈین کے مطابق لندن میں ملٹی ملین پاؤنڈ ریور سائیڈ ڈیولپمنٹ میں سوشل ہاؤسنگ فلیٹس میں رہنے والے بچوں کو ان کے مکان مالکان نے سائٹ پر مشترکہ جگہوں پر کھیلنے سے منع کیا ہے۔ والدین کو سٹی آف لندن کونسل کی طرف سے خطوط موصول ہوئے ہیں جن میں بتایا گیا کہ راہداریوں میں کھیلنے والے بچوں کو ایک پڑوسی کی طرف سے ’’شور کی پریشانی والی ایپ‘‘ پر ریکارڈ کیا گیا ہے اور یہ کہ گیمز ’’کرایہ داری کے معاہدوں کی خلاف ورزی‘‘ ہیں، اہل خانہ نے استدلال کیا ہے کہ بچوں کے کھیلنے کے لیے کوئی اور جگہ نہیں ہے اور ساؤتھ وارک کونسل جو کہ زمین کی مالک ہے، نے کہا کہ وہ اس بات کی تحقیقات کر رہی ہے کہ آیا ڈویلپر، برکلے ہومز، اصل منصوبہ بندی کی اجازت میں وعدہ کردہ کھیل کی جگہ فراہم کرنے میں ناکام رہا،جب خاندانوں نے پوچھا کہ ان کے بچے کہاں کھیل سکتے ہیں،تو سٹی آف لندن نے لکھا کہ وہ ’’کھیلنے کی جگہ فراہم کرنے کے لیے ڈویلپر کی کسی ذمہ داری‘‘ سے آگاہ نہیں ہیں۔ ون ٹاور برج 399 گھروں کی ایک بڑی سائٹ ہے جس میں پرائیویٹ فلیٹس ’’فائیو اسٹار رہنے‘‘ کی پیشکش کرتے ہیں، اسے برکلے نے ساؤتھ وارک کونسل کی ملکیت والی زمین پر بنایا تھا لیکن سوشل ہاؤسنگ فلیٹس جو ایک علیحدہ بلاک میں ہیں، اب لندن سٹی کے زیر انتظام ہیں، بچوں کے لیے کھیلنے کی کوئی جگہ مختص نہیں اور خاندانوں کو بتایا گیا ہے کہ چھت کا چھوٹا باغ صرف ’’پرسکون لطف اندوزی کے لیے‘‘ ہے جنہیں سماجی رہائش کے کرایہ داروں کو استعمال کرنے کی اجازت نہیں ، منصوبہ بندی کے مرحلے کے دوران تشخیص کے لیے اس سائز کی ترقیات کو معمول کے مطابق لندن کے میئر کو بھیجا جاتا ہے، اس وقت یعنی 2010 میں میئر لندن بورس جانسن تھے انہوں نے اور ان کے منصوبہ بندی کے اہلکاروں نے حتمی فیصلہ واپس ساؤتھ وارک کو اس فیصلے کے بعد پاس کیا کہ یہ بچوں کے کھیل کی جگہ کے بارے میں منصوبہ بندی کے رہنما خطوط پر پورا اترتا ہے۔ رپورٹ میں ’’سائٹ پر 235 مربع میٹر نامزد کھیل کی جگہ‘‘ کے ساتھ ’’سائٹ پر کھلی جگہ کے بقیہ حصے میں کھیل کے متعدد مواقع‘‘ کا حوالہ دیا گیا ہے۔ ڈویلپمنٹ پر رہنے والی سارہ نے کہا کہ بچے راہداری میں کھیل رہے تھے کیونکہ ان کے لیے کھیلنے کی کوئی اور جگہ نہیں تھی، انہوں نے بتایا کہ میں بہت پریشان تھی کہ کسی نے میرے 9 سالہ بچے کو ریکارڈ کیا جب کہ وہ کھیل رہا تھا اور مجھے خط (سٹی آف لندن کونسل کا) دھمکی آمیز ملا، ہمارے نقطہ نظر پر غور کرنے کی کوئی کوشش نہیں کی گئی ۔ ایلاکی 11 سالہ بچی ہے، انہوں نے کہا کہ کوری ڈور چوڑا اور کارپٹ ہے، ہم اس بات کو یقینی بناتے ہیں کہ وہ خاموشی سے کھیلے، ان کا کہیں اور خیرمقدم نہیں ہے، انہوں نے گراؤنڈ فلور کی لابی کو آزمایا ہے اور انہیں وہاں سے آگے بڑھنے کو کہا گیا ہے۔ لندن کے میئر کے ترجمان نے کہا ہے کہ یقینی طور پر اس سائز کی ترقی میں ان کے پاس بچوں کے کھیلنے کے لیے ایک محفوظ جگہ ہو سکتی ہے، ہم جانتے ہیں کہ ایسے باغات ہیں جنہیں ہم پرائیویٹ سائیڈ پر استعمال نہیں کر سکتے جو لاک ڈاؤن میں پریشان تھے تمام بچوں کو کھیلنے کے لیے بیرونی اور سبز جگہ تک رسائی حاصل ہونی چاہیے اور ان جگہوں کو الگ کرنے کی لندن میں کوئی جگہ نہیں ہے لندن پلان میں ہماری کھیل اور غیر رسمی تفریحی پالیسی کے لیے پورے لندن میں نئی ​​رہائشی ترقیوں کی ضرورت ہے تاکہ ہر بچے کو کم از کم 10 مربع میٹر کھیل اور معلوماتی تفریحی جگہ فراہم کی جائے۔ اس مثال میں میئر کے پاس نفاذ کے کوئی اختیارات نہیں ہیں اور آیا کوئی خلاف ورزی ہے یا نہیں اس کا تعین مقامی اتھارٹی کے لیے ہے۔ میئر ساؤتھ وارک کونسل کی جانب سے جاری تحقیقات کا خیرمقدم کرتے ہیں۔
یورپ سے سے مزید