آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
جمعہ7؍ ربیع الاوّل 1440ھ 16؍نومبر2018ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

چہرے کی جِلد ہمارے جسم کا وہ حساس حصہ ہے، جو موسمی تبدیلیوں سے سب سے پہلے متاثر ہوتا ہے۔ ایسے میں اسکی نگہداشت پر بروقت توجہ دینا ضروری ہے۔ گرمیوں کے دوران مون سون کا موسم راحت اور سکون کا باعث بنتا ہے، تو دوسری طرف کبھی کبھی یہ ہماری جلد کے حوالے سے کئی مسائل بھی سامنے لاتا ہے۔ اس سلسلے میں مون سون کے دوران کچھ احتیاطی تدابیر اختیار کرنے کی ضرورت ہے، تاکہ جِلد کے مسائل سے محفوظ رہ سکیں۔

مون سون کے دنوں میں فنگل انفیکشن کے مسائل سامنے آتے ہیں۔ یہ عموماًگیلی جِلد کو زیادہ متاثر کرتا ہے۔ برسات کے دنوں میں جِلد بھیگنے کی وجہ سے نرم ہو کر زیادہ آسان ہدف بن جاتی ہے۔ اس کے نتیجہ میں جِلد پر خارش، جلن، سرخی اور جگہ جگہ دھبے ہوجاتےہیں۔

بارش کے دنوں میں جلد کمزور، بیمار اور چکنی چکنی نظر آنے لگتی ہے۔ کبھی کبھار اس پر خارش بھی ہونے لگتی ہے۔ اس حوالے سے چند باتوں پر غور کریں۔

خشک جلد کی حفاظت

بارش کے دنوں میں اگر آپ کی جلد خشک ہونے لگے، تو عرق گلاب اور گلیسرین کا آمیزہ رات کو سونے سے قبل چہرے پر لگائیں۔ آپ بادام اور شہد کا آمیزہ بھی بنا سکتی ہیں۔ اسے 20منٹ تک چہرے پر لگائے رکھنے سے آپ کی جلد نرم ہو جائے گی۔

جلد کی چپچپاہٹ

مون سون کے دنوں میں اگر جلد پر چپچپاہٹ کا احساس ہو تو اس سے بچنے کے لیے صندل کی لکڑی کے پاؤڈر کا ایک کھانے کا چمچ عرق گلاب میں ملائیں اور اسے چہرے، ہاتھ، بازو اور پاؤں پر لگائیں یا پھر ناریل کے تیل میں زیرہ پاؤڈر ملاکر لگائیں اور اسے گردن اور آس پاس لگائیں، بعد میں نہا لیں۔ اس کے علاوہ، شہد اور لیموں کے ہم وزن رس ملا کر چہرے پر لگائیں۔ ایک گھنٹے بعد چہرہ دھو لیں۔ آپ چاہیں تو اس میں انڈے کی سفیدی بھی شامل کر سکتی ہیں۔ یہ چکنی جلد کے لیے بہت مناسب ہے۔ چکنی جلد کو موئسچرائزر کرنے کے لیے دو چائے کے چمچے عرق گلاب، دو سے چار قطرے اسٹرابیری آئل اور دو سے چار قطرے اورنج آئل ملا کر اسے چہرے اور ہاتھ پاؤں پر لگائیں اور دس سے پندرہ منٹ کے بعد دھولیں۔

پاؤڈر کا استعمال

مون سون کے دوران کریم بیسڈ اسکن پراڈکٹس استعمال کرنے سے پرہیز کرنا چاہیے۔ اس کے برعکس جِلد پر پاؤڈر بیسڈ فاؤنڈیشن کا استعمال کریں۔ بہت زیادہ فاؤنڈیشن یا کنسیلر کا استعمال مت کریں۔ بیس کے طور پر تھوڑا سا پاؤڈر استعمال کریں اور اس پر میک اپ کریں۔ گیلے موسم میں پاؤڈر بیسڈ فاؤنڈیشن زیادہ دیرپا ثابت ہوگی۔ اس کے علاوہ، میک اپ لگانے سے پہلے پرائمر کا استعمال بھی ضروری ہے۔

چکنی جلد کی حفاظت

مون سون کے موسم میں چکنی جلد زیادہ متاثر ہوتی ہے۔ ایسی جلد کے لیے واٹر بیسڈ موئسچرائزر کا استعمال کریں اور دن میں تین بار اپنے چہرے کو دھوئیں۔ بیسن کو عرق گلاب یا دودھ میں ملا کر چہرے پر لگائیں۔ اس سے آپ کی جلد کی صفائی بھی ہوگی اور جلد پر آنے والی چکنائی کا بھی خاتمہ ہوگا۔خواتین تھوڑی سی توجہ سے بارش کے موسم میں بھی اپنی جلد کو مسائل سے بچا کر تروتازہ رکھ سکتی ہیں۔

فیس اسکرب

چہرے کو گردوغبار اور موسمی اثرات سے بچانے کے لیے ہفتے میں دو بار فیس اسکرب کریں اور بھاری موئسچرائزنگ کریم، آئلی فاؤنڈیشن اور کریم بیسڈ کلر میک اپ سے دور رہیں تو زیادہ بہتر ہے۔ فیس واش جلد کو تازگی بخشتا ہے، مگر اسے دن میں ایک بار سے زائد استعمال نہ کریں۔ جب بھی چہرہ دھوئیں تو ہر بار ٹونر لگائیں۔

ٹوننگ ضروری ہے

بارش کے دنوں میں رات کے وقت جلد کی ٹوننگ بہت ضروری ہوتی ہے۔ انفیکشن سے بچنے کے لیے کوئی بھی اچھا سا اینٹی انفیکشن بیکٹریل ٹونر استعمال کریں۔ آپ گھر میں بھی اسے تیار کر سکتی ہیں، اس کے لیے ایک چائے کا چمچ دودھ لے کر اس میں پانچ قطرے چنبیلی کا تیل ملائیں اور اگر جلد چکنی ہو تو لیونڈر آئل میں تھوڑا پانی ملا کر پتلا کرلیں اور اس کے بعد چہرے پر لگائیں۔

٭ایک پیالی عرق گلاب میں دو چائے کے چمچے گلیسرین ملائیں اور اسے پورے جسم پر لگائیں۔ 15 منٹ کے بعد غسل کرلیں، اس سے پورے جسم کی خشکی ختم ہو جائے گی۔

٭ کھیرا کچل کر اس میں صندل کی لکڑی کا پاؤڈر ملائیں اور پورے جسم پر لگائیں، اس سے جِلد کو تازگی اور خوشبو ملے گی۔

Chatاپنی رائے سے آگاہ کریں