آپ آف لائن ہیں
بدھ10؍ربیع الاوّل 1442ھ28؍اکتوبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

سندھ: 10 ماہ کا تدریسی عمل 6 ماہ میں مکمل کرنے کا فیصلہ


محکمۂ تعلیم سندھ نے والدین کی پریشانی کا حل نکال لیا، رواں سال تعلیمی اداروں میں اہم مضامین کا کورس 30 سے 50 فیصد تک پڑھایا جائے گا۔

سیکریٹری تعلیم سندھ نے اسکول و کالج کے لیے کورس پڑھانے کا طریقہ کار تیار کر لیا۔

10 ماہ کا کورس 6 ماہ میں کیسے مکمل ہوگا؟ اس حوالے سے اب والدین اور طلباءکو ٹینشن لینے کی ضرورت نہیں ہے، سندھ کے محکمۂ تعلیم نے ان کی مشکل حل کر دی ہے۔

قائم مقام سیکریٹری تعلیم سندھ احمد بخش ناریجو نے اسکول و کالج میں کورس پڑھانے کا طریقہ کار تیار کر لیا۔

سیکریٹری تعلیم سندھ احمد بخش ناریجو کے مطابق گیارہویں اور بارہویں جماعت میں طلباء کو سائنس، ریاضی اور انگلش کا 30 فیصد کورس جبکہ نویں، دسویں کے طلباء کو سائنس، ریاضی، سندھی اور انگلش کا 40 فیصد کورس پڑھایا جائے گا۔

چھٹی سے آٹھویں جماعت کے طلباءکو سائنس، ریاضی، انگلش کا 50 فیصد کورس، پہلی سے پانچویں جماعت کے طلباء کو لٹریسی، ریاضی اور جنرل نالج کا 30 فیصد کورس پڑھایا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیئے:۔

اسکول کھلنے سے کورونا بڑھا تو فیصلہ بدل سکتا ہے: سعید غنی

سندھ کے تعلیمی اداروں میں ایس او پیز پر سختی سے عمل کی ہدایت

بچے 2 شفٹوں میں اسکول آئیں گے، اساتذہ کا کورونا ٹیسٹ لازمی

اسی ترتیب کے تحت طلباء و طالبات کے امتحانات بھی لیے جائیں گےجبکہ 2021ء میں تعلیمی سیشن مئی سے شروع کیا جائے گا۔

وزیرِ تعلیم سندھ سعید غنی سیکریٹری تعلیم سندھ احمد بخش ناریجو کی سفارش کو منظور کرنے کے بعد باقاعدہ طور پر سرکاری نوٹیفکیشن جاری کریں گے۔

قومی خبریں سے مزید