آپ آف لائن ہیں
بدھ16؍ربیع الثانی 1442ھ2؍دسمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

سی سی پی او لاہور کی پولیس میں بھی کورٹ مارشل کی تجویز

لاہور پولیس کے سی سی پی او عمر شیخ کا کہنا ہے کہ پولیس میں بھی کورٹ مارشل ہونا چاہیے۔

کیپیٹل سٹی پولیس آفیسر (سی سی پی او) لاہورعمر شیخ نے پولیس سسٹم میں کورٹ مارشل کی تجویز دیتے ہوئے کہا کہ پولیس میں بھی آرمڈ فورسز کی طرز پر کورٹ مارشل ہونا چاہیے۔

عمر شیخ نے کہا کہ موجودہ قوانین کے تحت سزائیں دینے سے کوئی بہتری نہیں آرہی، انصاف کی فراہمی کے لیے کورٹ مارشل طرز کی ترامیم وقت کی ضرورت ہے۔

سی سی پی او لاہور نے یہ تجویز آئی جی پنجاب کو ایک درخواست میں دی ہے۔

انہوں نے لکھا کہ پولیس میں ڈسپلن اور سروس ڈلیوری کیلئے سخت سے سخت قوانین بنانا ہوں گے۔


عمر شیخ نے کہا کہ 5 برسوں میں 25 سے 30 فیصد سے زائد نفری کو سزائیں دی گئیں مگر ان سزاؤں کے باوجود عدلیہ، میڈیا اور عوام شکایات کرتے دکھائی دیتے ہیں۔

عمر شیخ کے مطابق پولیس کورٹ مارشل کا مقصدیہ ہے کہ کوئی سزا یافتہ اہلکار یا افسر دوبارہ نوکری پر بحال نہ ہوسکے۔

ان کا مزید کہنا ہے کہ موجودہ قوانین کے تحت نوکری سے نکالے جانے پر اہلکار عدالتوں یا دیگر طریقوں سے واپس آ جاتے ہیں۔

قومی خبریں سے مزید