آپ آف لائن ہیں
منگل15ربیع الثانی 1442ھ یکم دسمبر 2020ء
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
Jang Group

ملزم پیراں دتہ کی برطانیہ کو حوالگی، وفاق سے جواب طلب

اسلام آباد ہائی کورٹ نے پاکستانی نژاد برطانوی شہری پیراں دتہ کی قتل کیس میں برطانیہ کو حوالگی کے معاملے میں انکوائری مجسٹریٹ کو حکم دیا ہے کہ وہ پیراں دتہ کیس کی سماعت جاری رکھیں، اس پر حتمی فیصلہ نہ کریں، جبکہ وفاق کو نوٹس جاری کرتے ہوئے اس سے جواب طلب کر لیا۔

ملزم پیراں دتہ کی درخواست پر سماعت اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے کی جبکہ ملزم کی جانب سے وکیل تنویر اقبال عدالت کے سامنے پیش ہوئے۔

وکیل تنویر اقبال نے عدالت میں مؤقف اختیار کیا کہ اس کیس میں جن ملزمان کو برطانیہ میں سزا ہوئی اس کا ریکارڈ لینے کی درخواست دی ہے، انکوائری مجسٹریٹ نے ہماری درخواست مسترد کر کے سارے کیس کا حتمی فیصلہ کر دیا۔

وکیل نے کہا کہ ابھی سیکشن افسر کو انکوائری مجسٹریٹ نے بلا رکھا ہے، وہ حتمی کارروائی ہے، اسی عدالت نے فیصلہ دے رکھا ہے کہ تفتیشی افسر کا یہاں آ کر بیان ریکارڈ کرانا ضروری ہے۔

وکیل تنویر اقبال نے یہ بھی کہا کہ سپریم کورٹ میں ملزم کی برطانیہ حوالگی کا اسی نوعیت کا کیس زیرِ التوا ہے، سپریم کورٹ نے یوکے اور یو ایس اے میں اس حد تک کتنے ملزمان کا تبادلہ ہوا، اس کی تفصیلات طلب کی ہیں۔

عدالتِ عالیہ نے پیراں دتہ کی درخواست پر وفاق کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا اور کیس کی مزید سماعت 10 دسمبر تک ملتوی کر دی۔


واضح رہے کہ پیراں دتہ خان پر 18 نومبر 2005ء کو برطانیہ میں لیڈی پولیس اہلکار کو قتل کرنے کا الزام ہے۔

پیراں دتہ نے انکوائری مجسٹریٹ اسلام آباد کا 9 نومبر کا حکم اسلام آباد ہائی کورٹ میں چیلنج کر رکھا ہے۔

قومی خبریں سے مزید