آپ آف لائن ہیں
جنگ ای پیپر
اتوار30؍جمادی الاوّل 1441ھ 26؍جنوری 2020ء
Namaz Timing
  • بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیئرمین و ایگزیکٹوایڈیٹر: میر جاوید رحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن
تازہ ترین
آج کا اخبار
کالمز

میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ کا انعقاد باعثِ مسرت ہے، نیول چیف

 پاک بحریہ کے سربراہ ایڈمرل ظفر محمود عباسی نے کہا ہے کہ پاکستان نیوی  کے لیے اپنے اہم ترین ادارے پاکستان نیوی وار کالج لاہور میں 4 سے 12 دسمبر تک میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ 2019 کا انعقاد انتہائی مسرت و اطمینان کا باعث ہے۔

میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ 2019 کے انعقاد اور میری ٹائم سینٹر آف ایکسیلینس کے افتتاح کے موقع پر اپنے پیغام میں نیول چیف نے کہا کہ میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ کا مسلسل تیسرے سال منعقد ہونا نہ صرف حوصلہ افزا ہے بلکہ اس کی کامیابی اس امر میں پوشیدہ ہے کہ 2017 میں اپنے افتتاحی سیشن سے ہی اس ورکشاپ نے ملک کے پالیسی سازوں، ایگزیکٹوز، دانشوروں، تجارتی حلقوں اور میڈیا میں میری ٹائم سے متعلق آگہی اور دلچسپی کو فروغ دیا ہے۔

میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ ملک کے مختلف متعلقہ اداروں کے درمیان میری ٹائم سیکیورٹی کے معاملات سے آگہی پیدا کرنے کے لیے  رابطے کا پلیٹ فارم بن چکی ہے جو ملکی سیکیورٹی پر میری ٹائم کے اثرات اور با لخصوص بلیو اکانومی کے لامحدود امکانات کو اجاگر کرتی ہے۔

گزشتہ دسمبر میں میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ کے ساتھ ساتھ پاک بحریہ نے پہلی میری ٹائم ڈاکٹرائن آف پاکستان (MDP) بھی متعارف کرایا تاکہ قومی منظر نامے پر میری ٹائم کلچر کو اُجاگر کرنے کی کوششوں کو تیز تر کیا جاسکے۔

حال ہی میں پاکستان نیوی وار کالج لاہور نے پاک بحریہ کی جانب سے ملک کی مختلف یونیورسٹیوں کے ساتھ مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط کیے ہیں۔ ان مفاہمتوں کا مقصد سرکاری و نجی تعلیمی اداروں کے نوجوانوں میں اس شعبے سے متعلق دلچسپی بڑھا کر میری ٹائم تحقیق کو وسعت دینا ہے۔

اس سال انشاءاللّٰہ پاک بحریہ میری ٹائم سینٹر آف ایکسیلینس کا افتتاح کرنے جارہی ہے۔ یہ سینٹر علمی اور عملی میدانوں میں تحقیق کے ذریعے فیصلہ سازوں کو پالیسی لیول پر میری ٹائم سیکیورٹی سے متعلق چیلنجوں کے لیے  قابل عمل حل فراہم کرے گا جس سے اس شعبے میں نمایاں پیش رفت ہوسکے گی۔

مجھے پورا یقین ہے کہ پاکستان کا مستقبل سمندر سے ناگزیر طور پر وابستہ ہے۔ بڑھتی ہوئی آبادی اور نوجوانوں کی بڑی تعداد ملک کے لیے چیلنج اور اثاثہ بھی ہے۔ سمندری شعبے سے متعلق تحقیق میں مناسب سرمایہ کاری، بلیو اکانومی کے مواقع سے استفادہ اور سی پیک کے میری ٹائم سے متعلق حصوں کی موثر فعالیت سے نوجوانوں کے لیے روزگار اور خوشحالی کے وسیع مواقع پیدا کیے جاسکتے ہیں۔

پاک بحریہ اس قومی مقصد کے لیے اپنا کردار ادا کرتی رہے گی۔ مجھے امید ہے کہ میری ٹائم سیکیورٹی ورکشاپ کے منتظمین اور شرکاء کے لیے یہ کارآمد، حوصلہ افزا اور باہمی طور پر مفید تجربہ رہے گا۔ میں ان لوگوں کو بھی مبارک باد دیتا ہوں جن کی سخت محنت کی وجہ سے میری ٹائم سینٹر آف ایکسیلینس کا خواب تعبیر کے رنگوں میں ڈھل سکا۔

قومی خبریں سے مزید