• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

مقتولہ نور مقدم کے والد کو آج ہی وکیل مقرر کرنے کا حکم

اسلام آباد کی عدالت نے نور مقدم قتل کیس کے ملزم ظاہر جعفر کے والدین کی درخواستِ ضمانت پر دلائل کے لیے 4 اگست کی تاریخ مقرر کر دی جبکہ مقتولہ نور مقدم کے والد شوکت مقدم کو آج ہی وکیل مقرر کرنے کا حکم دے دیا۔

ایڈیشنل سیشن جج محمد سہیل نے مرکزی ملزم ظاہر جعفر کے والدین کی ضمانت کی درخواستوں پر سماعت کی۔

جج نے سوال کیا کہ اس کیس میں مقدمے کا تفتیشی افسر کون ہے؟

سرکاری وکیل ساجد چیمہ نے بتایا کہ ابھی مقدمے کا تفتیشی افسر لاہور میں ہے، فائل بھی اس کے پاس ہے، تفتیشی افسر ویڈیو کا فرانزک کرانے کے لیے لاہور گیا ہے۔

مقتولہ نور مقدم کے والد شوکت مقدم عدالت میں پیش ہوئے، جن کی وکیل کرنے کے لیے مہلت کی استدعا منظور کر لی گئی۔

مدعی شوکت علی مقدم نے عدالت سے استدعا کی کہ ابھی وکیل کرنا ہے، جس کے لیے مجھے پیر تک کا وقت دیا جائے۔

جج نے انہیں حکم دیا کہ آپ آج ہی وکیل کر کے وکالت نامہ جمع کرائیں تاکہ اس کو ریکارڈ پر لایا جا سکے۔

قومی خبریں سے مزید