Irfan Athar Qazi - Urdu Columns Pakistan | Jang Columns
| |
Home Page
بدھ29؍ربیع الثانی 1439ھ 17 ؍ جنوری2018ء
عرفان اطہر قاضی
January 15, 2018
پیسہ بھی بچائیے اور عزت بھی

آج میرے ہاتھ اور قلم کانپ رہے ہیں کچھ لکھنے کی سکت نہیں۔ دل پھٹا جارہا ہے ،خوف کی ایسی کیفیت سے دو چار ہوں جس کا بیان مشکل ہی نہیں ناقابل فہم بھی ہے۔ آج مجھے کسی ٹرمپ کی دھمکی کا خوف ہے نہ اس بات کی فکر کہ پاکستان کو ٹرمپ کی دھمکی افغانستان میں غیر ملکی افواج کو کس حد تک نقصان پہنچائے گی اور امن کی آڑ میں افغانستان میں اور کتنا خون...
January 09, 2018
ضمیر کا قیدی

ٹرمپ نے طبلِ جنگ کیا بجایا،ہمارے معزز ترین بڑے مولانا صاحب بلوچستان اسمبلی کے سامنے مورچہ لگا بیٹھے۔ گویا مناد نے پیش آمدہ حالات کی منادی کردی ۔ ہونی ہو کر رہے گی، منصوبہ ساز اپنے منصوبے پر ہر صورت عمل کریں گے۔ انجام کیا ہوگا خدا جانے۔ جی ہاں بلوچستان میں کھلاڑیوں نے سینیٹ انتخابات سے قبل گریٹ گیم کا آغاز کردیا اور وزیراعلیٰ...
January 02, 2018
غائبانہ نماز جنازہ

پاکستان کی سیاست کے روپ بہروپ بڑے نرالے ہیں، گرگٹ کی طرح رنگ بدلتے ہمارے سیاست دان مفادات کی جنگ میں کیا کیا پینترے بدلتے ہیں الامان والحفیظ۔ برسی بے نظیر بھٹو شہید کی ہو، دکھ بلاول سے زیادہ ن لیگ والوں کو ہو،اسے قیامت کی نشانی ہی کہا جاسکتا ہے اور کچھ نہیں۔ واہ ری قسمت ہمارے نصیب میںکیسے کیسے بہروپئے لکھ دیئے، کیسے کیسے دغا باز...
December 26, 2017
کوتاہ اندیش سیاست دان ،روشن پاکستان

پاکستان کی سیاسی تاریخ میں ستمبر ’’ستم گر‘‘ دسمبر ’’دشمن بر‘‘ کے طور پر جانے والے مہینے سال 2018ء کی آمد سے قبل اپنا رخ بدل رہے ہیں سردی کی شدت میں سورج کی تمازت سے سکون محسوس کرتے دسمبر کی روشن کرنیں ایک بار پھر نئی امید اور امنگ کے ساتھ ابھر رہی ہیں، پاکستان کی ایک نئی تاریخ لکھی جارہی ہے۔ بے یقینی کو یقین‘ ناامیدی کو امید میں...
December 18, 2017
کس سےمنصفی چاہیں

جس ریاست سے انصاف کا جنازہ نکل جائے وہاں لاقانونیت، بددیانتی، بدعنوانی، انسانی حقوق کی پامالی اور بے شرمی و بے حِسی کا راج ہوتا ہے اور عدل و انصاف، دیانت داری، جستجو، انسانیت، احساس اور رحم دلی شہرِ خموشاں کی گود میں گہری نیند سوجاتے ہیں، وہاں ملکی خزانے لوٹ لئے جاتے ہیں، دہشت گردی عام ہوجاتی ہے اور بھوکے لوگ خودکشیوں پر اُتر...
December 12, 2017
دھمال کیوں؟

پہلے تین حروف امریکہ پر جس نے گریٹر اسرائیل کی باضابطہ بنیاد رکھ دی۔ یہ جنونی اور غاصب ٹرمپ کی بہادری نہیں، ہماری کمزوری ہے۔ ہماری نیتوں میں جو فتور اوراپنی بنیا د چھوڑنے کی جو روِش ہے اس کے سبب یہ ہو کرہی رہناتھا ۔ بحیثیت مجموعی ہم سوا ارب مسلمان اپنے گریبان میں جھا نکیں تو اس کا جواب بڑی آسانی سے مل جائے گا ، افسوس کہ ہم جل گئے...
December 04, 2017
اسلام،پاکستان اور جاتی امراء کی محفل

کیسی کیسی شان والے لوگ گزر گئے ، کیسی ان کی آن تھی۔ مخالفت بھی کرتے بڑی آن کے ساتھ، مفاہمت کرتے تو شان کے ساتھ،سیاست کی توہمیشہ نظریات کی، پاکستان کے مفاد کی، عوا م کی، جمہوریت کی خاطر جانیں تک قربان کردیں، سولی چڑھ گئے اُف تک نہ کیا، کیا وقار تھا کہ مخالفین کو للکارتے تو گویا سینے پر مونگ دل دیتے مگر مجال ہے کہ کسی کی روح کو چیرا...
November 27, 2017
اب بھی وقت ہے سنبھل جائیں

دھرنے، پُرتشدد احتجاج، سیاسی الزام تراشیاں، ذاتی بہتان، دست و گریبان ہوناکیا یہی ہمارے معاشرے کی پہچان ہے۔ کیا یہ انداز سیاست ہمیں ترقی کی منزل تک لے جاسکتا ہے۔ کیا ہم سیاسی نعروں کے چنگل میں پھنس کر دھوکہ کھاتے رہیں اور اپنے بچوں کا مستقبل یونہی تباہ ہونے دیں۔ آج پاکستانی معاشرے سے دلیل ختم ہو چکی ہے۔ دھونس، تشدد کا دور دورہ...
November 13, 2017
باندر کلّے کی سیاست

ملکی سیاست کا حال بچپن کے ایک دلچسپ کھیل جو عموماً پنجاب میں کھیلا جاتا تھا’’باندر کلاّ ‘‘ جیسا ہے جس میں باری باری ایک شخص کو بندر بنا کر ہاتھ میں رسی پکڑا دی جاتی تھی اور اردگرد سب کھلاڑیوںکے نئے پرانے جوتوں کا ایک دائرہ کھینچ دیا جاتا اور’’بندر‘‘ کا کام ان جوتوں کی حفاظت کرنا ہوتا تھا۔ اس کھیل کے باقی تمام کھلاڑی مختلف...
November 06, 2017
بلوچستان کی صورتحال

بلوچستان سے عشق و محبت ، غم والم کی داستان کا ایک درد ناک پہلو یہ بھی ہے کہ بڑے معززلوگوں کی ایک محفل ہے اور وہ بلوچستان کے حالات میں بہتری کی نوید سنا رہے ہیں مگر انہی کے پہلو میں ایک بڑے کمرے میں بیٹھے کچھ حکومتی اتحادی وزراء و معاونین ان کی باتوں پر مسکرا رہے ہیں اورایک معاون (آدھے وزیر) بڑے فخر سے اپناہاتھ بلند کرتے ہیں اور...
October 31, 2017
راستے کا پتھر نہیں سر کا تاج بنائیں

بلوچستان کے در و دیوار پر جو سبق لکھا ہے وہ ہمیں ستر برس بعد بھی یاد نہیں ہوا۔ ہم خود کو دھوکہ دینے چلے ہیں۔ سیاست دان ہوں یا اسٹیبلشمنٹ دونوں نے مسئلہ حل کرنے کا جو پیمانہ رکھ چھوڑا ہے وہ شکایات، تحفظات، ناراضیوں اور نفرتوں سے لبریز ہوچکا ہے۔ اسٹیبلشمنٹ کو جو کام کرنا ہے وہ کر رہی ہے البتہ اس میں غلطیوں کے احتمال کو نظرانداز نہیں...
October 23, 2017
گِدھوں کا کھیل

زندگی کے رنگ بھی بڑے نرالے ہیں، یہ خوشیوں، غموں، دکھوں، مایوسی میں روشنی اورراستہ تلاش کرنے سے بھرپور ایک طویل تھکا دینے والا ایسا سفر ہے جو اسے حوصلے ،ہمت، صبر سے گزار گیا منزل کو پا گیا۔ دکھ ، درد، غم کی کیفیت میں خوشگوار یادوں میں کھو جانا گویا اس مشکل کیفیت سے نکلنے کا جواز بن جاتا ہے اور انسان میں جینے کی ایک نئی اُمنگ پیداکرتا...
October 16, 2017
بس ذرا انتظار کیجئے

حکمراں پارٹی ن لیگ بوکھلا گئی ہے، اندھیرے میں تیر چلارہی ہے۔ سمجھ نہیں آرہی کیپٹن (ر) صفدر کس کو غدار کہہ گئے۔ کیا وہ اس معاملے میں ایوان میں منظور ہونے والے متنازعہ ترمیمی بل پر قائد ایوان وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کو غدار کہہ رہے تھے یا اس بل پر ’’عرق ریزی‘‘ کرنے والے وزیر قانون زاہد حامد کو غدار کہہ رہے تھے یا پھر حکمراں جماعت...
October 09, 2017
بڑا خاموش پیغام ہے ،ذرا سوچئے

دل آج بہت بوجھل ہے خیالات خدشات میں بدلتے جارہے ہیں، اداسی ہے کہ ختم ہونے کو نہیں آتی۔ حالات ہیں کہ سنبھلنے کا نام ہی نہیں لے رہے۔ توبہ استغفار ہر طرف سازش ہی سازش نظرآرہی ہے۔ کبھی میمو گیٹ ، کبھی پاناما کیس ، کہیں جے آئی ٹی اور ڈان لیکس اور اب تازہ ترین انتخابی اصلاحات کی آڑ میں تحفظ ختم نبوت پر ایمان لانے کے حلف نامے کو اقرار...