• بانی: میرخلیل الرحمٰن
  • گروپ چیف ایگزیکٹووایڈیٹرانچیف: میر شکیل الرحمٰن

سیدنا مفضل سیف الدین کا معاشرے میں اتحاد اور باہمی تعاون کی اہمیت پر زور

کراچی(اسٹاف رپورٹر)داؤدی بوہرہ برادری کے رہبر سیدنا مفضل سیف الدین نے معاشرے میں اتحاد اور باہمی تعاون کی اہمیت پر زور دیا اور قدرت کے استعاروں سے انسانیت کا درس دیتے ہوئے کہا کہ ستاروں کی طرح رہبری کرو، جیسے کھانے میں نمک ذائقہ بڑھائے تم دوسروں کی زندگیوں کو آگےبڑھاؤ اوربارش کی طرح نشونما کرو۔ تفصیلات کے مطابق عشرہ مبارکہ میں قرآنی تعلیمات اور پیغمبروں کی زندگی سےحاصل معلومات کےخزانے آشکارہوگئے۔ داؤدی بوہرہ برادری کےرہبرسیدنا مفضل سیف الدین نےنبی آخرالزماں حضرت محمد ﷺ کی تین احادیث کی روشنی میں برادری، بھائی چارے اور ذاتی ترقی کےموضوعات پر سیرحاصل گفتگو کی۔ ان احادیث مبارکہ میں قدرت کےاستعاروں سےرہنمائی لی گئی ہے کواکب یاستاروں کوبطورخضر یارہنمائی کرنےوالے، کھانے کاذائقہ ابھارنےمیں نمک کی حیثیت، اور آسمان سے برسنے والی بار کو نشو نماسے تشبیہ دی گئی ہے۔ سیدنا مفضل سیف الدین نے معاشرے میں اتحاد اور باہمی تعاون کی اہمیت پرزور دیا۔ انہوں نے کہا ایک دوسرے کی ستاروں کی طرح رہنمائی کریں، ایک دوسرے کی زندگیوں کوبہتربنانےمیں ایسے مددکریں جیسےنمک کھانے کا ذائقہ بڑھاتاہے، اور بارش کی طرح تمام انسانیت کےلیےخیرکاباعث بنیں۔ خوشی کےلمحات ہوں یا دکھ کی گھڑی ایک دوسرے کا سہار ابنیں۔ تاریخی واقعات کےحوالوں اورمثالوں کا ذکر کرتے ہوئےسیدنا مفضل سیف الدین نے تعلقات میں سمجھداری برتنےپرزور دیا۔ مادی اورروحانی توازن برقرار رکھنےکادرس دیتےہوئے کہا کہ اپنےایمان اور اقدارپرقائم رہنےسے کامیابیاں مقدر ہوتی ہیں۔ انہوں نےبھائی چارے اور مخلص تعلقات کی بنیاد پر قائم ایسے معاشرے کی ترویج پر زور دیا جس کی تعلیمات حضورﷺ کی زندگی سےملتی ہیں۔ سیدنا مفضل سیف الدین صدر میں واقع طاہری مسجد میں عشرہ مبارکہ کےسلسلے میں دس خطبات دیں گے۔ قرآنی تعلیمات، سیرۃ النبی ﷺ اور صفاتِ اہلبیت سے ہدایات لیتےہوئے روزانہ خطبات میں مختلف موضوعات پر امت کی رہنمائی کی جارہی ہے۔
اہم خبریں سے مزید